’لبنان کے سابق وزیر اعظم کو ایران نے قتل کرایا‘سعودی عرب کے نائب وزیردفاع کے الزام سے نیا پنڈورا باکس کھل گیا

’لبنان کے سابق وزیر اعظم کو ایران نے قتل کرایا‘سعودی عرب کے نائب وزیردفاع ...
’لبنان کے سابق وزیر اعظم کو ایران نے قتل کرایا‘سعودی عرب کے نائب وزیردفاع کے الزام سے نیا پنڈورا باکس کھل گیا

  



ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب کے نائب وزیردفاع شہزادہ خالد بن سلمان نے الزام عائد کر دیا ہے کہ لبنان کے سابق وزیراعظم رفیق حریری کو ایرانی ملیشیا نے قتل کیا۔ شہزادہ سلمان نے اپنے ٹوئٹر اکاﺅنٹ پر پے درپے کئی ٹویٹس کیں جن میں یہ الزام عائد کیا گیا۔ انہوں نے لکھا کہ رفیق حریری ملک میں اصلاحات اور ازسرنو احیا کا ایک پراجیکٹ چلا رہے تھے۔ ان کے قتل کا مقصد اس پراجیکٹ کو روکنا تھا۔

شہزادہ خالد نے مزید لکھا کہ ”حریری کا ویژن اور ان کا یہ قومی منصوبہ ، جس کا مقصد لبنان میں استحکام اور خوشحالی لانا تھا، ان کے قتل کے بعد بھی جاری رہے گا۔ اس گروہی ملیشیا کی منصوبہ بندیوں کے خلاف بھی لڑائی جاری رہے گی جو لبنان کی سالمیت اور لبنانی عوام کی عظمت پر یقین نہیں رکھتی۔“ واضح رہے کہ لبنان کے سابق وزیراعظم رفیق حریری آج سے 15سال پہلے لبنان کے دارالحکومت بیروت میں ایک بم دھماکے میں مارے گئے تھے۔

مزید : عرب دنیا