حکم امتناعی کے باوجود 26سکولوں کی تعمیرومرمت کے ٹینڈر کھولنے کا انکشاف

حکم امتناعی کے باوجود 26سکولوں کی تعمیرومرمت کے ٹینڈر کھولنے کا انکشاف

لاہور(شہباز اکمل جندران//انوسٹی گیشن سیل)ضلعی انتظامیہ نے مبینہ طورپر توہین عدالت کا ارتکاب کرتے ہوئے عدالتی حکم امتناعی کے باوجود گزشتہ روز شہر کے 26پرائمری ، مڈل اور ھائی سکولوں کی تعمیر ومرمت کے ٹینڈر اوپن کردیئے ہیں درخواست گزار عتیق الرحمن کے مطابق سول جج درجہ اول محمد عمران شیخ کی عدالت نے حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے ڈی این آئی ٹی کے بغیرمنصوبوں کی الاٹمنٹ سے روک دیاتھا لیکن ایکسئن و ڈسٹرکٹ افسر بلڈنگزراؤ خورشید عالم نے ڈی این آئی ٹی اور تخمینے جیسے امور نمٹائے بغیر ہی ٹینڈر اوپن کردیئے ہیں جو کہ حکم امتناعی کی خلاف ورزی ہے عتیق الرحمن کا کہناتھا کہ مذکورہ منصوبوں کے ٹینڈر اس سے قبل بھی ڈی این آئی ٹی کے بغیر لگائے گئے اور اسی وجہ سے منسوخ بھی ہوئے جس پر ضلعی حکومت کی طرف سے ڈسٹرکٹ افسر مذکورہ کی ناقص کارکردگی کی نشاندہی بھی کی گئی اور کئی اہم جلاسوں میں راؤ خورشید عالم کو اپنی کارکردگی بہتر بنانے کے لیے زبانی طورپر کہا گیا تو راؤ خورشید عالم نے اپنی سیٹ بچانے کی خاطر عدالتی حکم امتناعی کو نظر انداز کیاجو کہ توہین عدالت ہے۔ اس ضمن میں توہین عدالت کی درخواست دائر کی جارہی ہے دوسری طرف ڈسٹرکٹ افسر بلڈنگز راؤ خورشید عالم کا کہناتھا کہ عدالتی حکم امتناعی انہیں موصول ہوچکا ہے لیکن وہ ٹینڈر اوپن کرکے کسی قسم کی عدالتی احکامات کی خلاف ورزی نہیں کررہے اور تمام امور قانونی دائر ہ کار میں ر ہتے ہوئے انجام دیئے جارہے ہیں جن کا ثبوت وہ توہین عدالت کی درخواست کے جواب میں عدالت کے روبرو پیش کرینگے ان کا کہناتھا کہ تمام منصوبوں کی ڈی این آئی ٹی اور تخمینے منظور ہوچکے ہیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...