پولیس حراست میں ہلاک 26سا لہ عاقب پو سٹ مار ٹم کے بعدسپرد خاک

پولیس حراست میں ہلاک 26سا لہ عاقب پو سٹ مار ٹم کے بعدسپرد خاک

لا ہور (کرا ئم سیل )شما لی چھاؤ نی سی آ ئی ائے پو لیس کی زیر حراست مبینہ تشدد سے ہلا ک ہو نے وا لے 26سا لہ ا یف ائی اے ملازم کے بیٹے کی نعش پو لیس نے پو سٹ مار ٹم کے بعد ور ثا ء کے حوالے کردی ، نعش گھر پہنچنے پر کہرا م بر پا ہو گیا ،بعداز ں عا قب کو سینکڑو ں سوگوارو ں کی موجودگی میں سپر خا ک کردیا گیا ۔ پو لیس کے مطا بق ملزم نے دلبرداشتہ ہو کر ہتھکڑی کا پھندا لے کر خودکشی کر لی۔تفصیلا ت کے مطا بق جو ہر ٹا ؤ ن وقاص کا لو نی کا رہائشی26سا لہ عا قب جسے جو ہر ٹاؤ ن پولیس نے مقدمہ نمبر 885/14 بجرم 302میں سب انسپکٹر محمد بخش نے نامزد کیا تھا،گزشتہ روز ڈی ایس پی سی آئی اے کینٹ عمر فاروق نے انہیں اور مخالف پارٹی کوتفتیش کے لیے بلایا جس پر وہ دوپہر 3بجے کے قریب ان کے دفتر آئے ان کے ساتھ نیاز احمد،محمد اسلم ،محمد افضل،محمد عاقب اور محمد ثاقب آئے جبکہ مخالف پارٹی کی جانب سے محمد اکبر ڈوگر،مبشر حسین و غیر ہ کوڈی ایس پی نے پارٹیوں کا موقف سنا اور چلے گئے بعد ازاں ملزمان اکبر علی ڈوگر نے مبشر حسین اس کے بھائی جو سی آئی اے کے اے ایس آئی اور دو پولیس اہلکاروں خالد فردوس اور مقدس حسین کے ساتھ مل کر محمد عاقب کو ایک کمرے میں لے گئے اور الٹا لٹکا کے اس پر ان کے سامنے تشدد کرنا شروع کر دیا ،جس سے وہ ہلاک ہو گیا تھا۔

مزید : علاقائی


loading...