امریکی صدر کے دورے کے دوران مجاہدین کے حملوں کا خطرہ ہے، بھارتی فوج

امریکی صدر کے دورے کے دوران مجاہدین کے حملوں کا خطرہ ہے، بھارتی فوج

نئی دہلی/سرینگر( مانیٹرنگ ڈیسک +اے این این) بھارتی فوج نے پاکستان پر الزام تراشی کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی صدر کے دورہ کے دوران مجاہدین کے حملوں کا خطرہ ہے،سرحد پار سے حملے اس بات کا ثبوت ہیں کہ مجاہدین کو پاکستان کی مدد حاصل ہے،مقبوضہ کشمیر میں امن مشکل سے حاصل کیا اسے برقرار رکھنا ہو گا،کنٹرول لائن پر 250مجاہدین دراندازی کے لئے تیار بیٹھے ہیں انھیں ناکام بنانا ہو گا۔گزشتہ روز پورے بھارت میں7ویںآرمی ڈی کے سلسلے میں سب سے بڑی تقریب نئی دلی میں منعقد ہوئی جہاں بری فوج کے سربراہ جنرل دلبیر سنگھ سہاگ نے خطاب کیا۔انہوں نے ایک مرتبہ پھر پاکستان پر جموں کشمیر میں جنگجوؤں کی مدد و اعانت کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ جنگی تیاریوں پر توجہ مرکوز کرنا فوج کی اولین ترجیح ہونی چاہئی۔ انہوں نے کہا دہشت گردوں کے حملے اس بات کی طرف اشارہ کرتے ہیں کہ انہیں سرحد پار کی حمایت حاصل ہے، ہمیں جموں کشمیر میں قیام امن کو برقرار رکھنا ہوگا جو انتہائی مشکلات کے بعد قائم کیا گیا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ فوج کو ہی ریاست میں امن برقرار رکھنے میں اپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔تاہم انہوں نے کہافوج کا کام جنگ لڑنا اور اس کیلئے تیاررہنا ہے، ضرورت اس بات کی ہے کہ اس پر توجہ مرکوز کی جائی۔ راجوری میں آرمی ڈے کے موقعہ پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے جے او سی سرن جیت سنگھ نے کہا کہ 150کے قریبمجاہدین کنٹرول لائن سے اس طرف آنا چاہتے ہیں لیکن آرمی ان کی کوشش کو ناکام کرنے کیلئے چوکنا ہے۔ انہوں نے بتایا کہبھارتی فوج کنٹرول لائن پر کڑی نظر رکھے ہوئے ہیں اور آرمی کسی بھی طرح کی در اندازی کرنے نہیں دے گی۔ انہوں نے بتایا کہ آرمی رات و دن بارڈروں پر کام کرتی ہے اور ملک کو ترقی و خوشحالی میں ہاتھ بٹاتی ہے۔ انہو ں نے فوجی جوانوں کو آرمی ڈے کے موقعے پر مبارکباد دی اور راجوری کے لوگوں سے تعاون طلب کیا۔ دریں اثنا راجوری میں آرمی ڈے منایا گیا جس میں بچوں نے رنگا رنگ ثقافتی و تمدنی پروگرام دکھایا جبکہ آرمی نے اس موقعے پر دوڑ مقابلہ منعقد کرایا اور لوگوں کی سہولیت کیلئے میڈیکل کیمپ بھی لگایا۔ راجوری کے اے ایل جی گراونڈ میں منعقدہ تقریب میں میجرجنرل سرن جیت سنگھ مہمان خصوصی تھے ۔ اس موقعے پر آرمی ویلی ویو سکول اور آرمی گڈ ول سکول کے بچوں نے رنگا رنگ پروگرام دکھایا ۔ بچوں نے ڈرل میں بھی حصہ لیا۔ آرمی نے اس موقعے پر لوگوں کیلئے میڈیل کیمپ لگایا اور لوگوں میں مفت دوائیاں تقسیم کی۔ اس موقعے پر آرمی کے آفیسران کے علاقہ ضلع انتظامیہ، پولیس انتظامیہ اور راجوری کے مقامی لوگ بھی موجود تھی۔ آرمی ڈے کے سلسلے میں7جنوری تک پروگراموں کا سلسلہ چلتا رہے گا۔ادھر آرمی ڈے کے سلسلے میں نگروٹہ میں قائم فوج کی6ویں کور کے اہتمام سے بھی تقریب کا اہتمام کیا گیا۔اس موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے 16کور کے جنرل آفیسر کمانڈنگ لیفٹنٹ جنرل کوسم ہمالیہ سنگھ نے دعوی کرتے ہوئے کہا کہ اس طرح کی خفیہ اطلاعات موصول ہوئی ہیں کہ امریکی صدر باراک اوبامہ کی بھارت آمد کے موقعے پر پاکستان میں مقیممجاہدین کی طرف سے اسکولوں، مذہبی مقامات، فورسز کانوائے اور شہری علاقوں جیسے اہداف کو نشانہ بنایا جاسکتا ہے ۔ انہوں نے دعوی کرتے ہوئے کہا کہ پیر پنچال رینج میں لائن آف کنٹرول کی دوسری جانب 36لانچنگ پیڈس پر قریب 200کے قریب مجاہدین دراندازی کے لئے تیار بیٹھے ہیں ۔انہوں نے الزام عائد کیا کہ سرحد پار مجاہدین کا بنیادی ڈھانچہ برقرار ہے اور انہیں پاکستانی حکومت کے ساتھ ساتھ فوج اور آئی ایس آئی کی بھرپور حمایت حاصل ہے۔

مزید : صفحہ آخر


loading...