وہ وقت جب مدد کیلئے عامر خان نے برطانوی وزیر اعظم کو فون کیا

وہ وقت جب مدد کیلئے عامر خان نے برطانوی وزیر اعظم کو فون کیا
وہ وقت جب مدد کیلئے عامر خان نے برطانوی وزیر اعظم کو فون کیا

  


لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکی امیگریشن افسر کی طرف سے ویزا دینے سے انکار کئے جانے پر پاکستانی نژاد برطانوی باکسر عامر خان کوبرطانیہ کے وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون کو فون کرنا پڑ گیا۔ تفصیلات کے مطابق یہ واقعہ گزشتہ سال ماہ ستمبرمیں اس وقت پیش آیا جب عامر خان کو امریکہ کے شہر لاس ویگاس میں ایک باکسنگ میچ کی کمنٹری کرنے کیلئے امریکہ پہنچنا تھا مگر ویزہ افسر نے انہیں ویزہ دینے سے ہی انکار کر دیا تھا۔

آصف زرداری نے شادی کر لی؟ صحافی نے اہم دعویٰ کر دیا

انہیں ویزہ افسر کی طرف سے بتایا گیا کہ وہ آج امریکہ کیلئے روانہ نہیں ہو سکتے اور ان کا ویزہ مسترد کر دیا گیاہے۔ اس پر باکسر کی یہ خوش قسمتی تھی کہ ان کے برطانوی وزیر اعظم سے اچھے مراسم ہیں۔ لہذا انہوں نے فوری طور پر ڈیوڈ کیمرون کو فون کیا کہ وہ اپنے سفارتی ذرائع استعمال کر کے ان کے ویزے کا انتظام کریں۔

اس بات کا انکشاف انہوں نے ایک میگزین کو دیئے گئے انٹرویو میں کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ ڈیوڈ کیمرون میرے دوست ہیں اور انہوں نے میری خاطر ایک کمیونٹی سینٹر بھی کھلوایا ہے، جب میںنے انہیں ویزے سے متعلق مسئلے پر فون کیا تو انہوں نے مجھے کہا کہ ایک منٹ کیلئے انتظار کریںاور چند کمحوں بعد ہی واپس فون کر کے بتایا کہ میرا مسئلہ حل ہو چکا ہے ۔ عامر خان کا کہنا ہے کہ ان کا ویزہ شاید گیارہ ستمبر کی تاریخ کے سبب مسترد کیا گیا تھا ۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...