دَرد دِل کے واسطے پیدا کیا انساں کو

دَرد دِل کے واسطے پیدا کیا انساں کو

  

مکرمی!بہتر انسان وہ ہے جو دوسروں کے لئے سود مند اور نفع پہنچانے والا ہو اور جس نے انسانیت کی خدمت کو اپنا اوڑھنا بچھونا بنا رکھا ہو انسانیت کا تقاضا بھی یہی ہے کہ ہر انسان کے دل میں دوسروں کے لئے خدمت ہمدردی، پیار محبت اور خیر خواہی کے علاوہ دردِ دل اور خیر سگالی کا جذبہ موجزن ہو۔ انسانیت سے محبت کرنے والے انسان کو بیمار کے علاج معالجہ کی فکر، ضرورت مند کی ضرورت، دکھی دل کا مداوا، حاجت مند کی حاجت روائی اور بے سہارا کا سہارا بننے کے علاوہ دوسروں میں سکون اور محبت بانٹنے کی فکر دامن گیر رہتی ہے وہ یتیموں ،مسکینوں، غریبوں اور بے آسرالوگوں کا سہارا بن کر اپنے اللہ کو خوش کرکے صرف اسی سے ہی جزا اور اجر کا طالب رہتا ہے چاہے دنیا اسے حقیر ہی کیوں نہ جانے وہ دنیا وی آسائشوں کو ہیچ سمجھ کر اللہ تعالیٰ کی رضا اور احکام خداوندی کی بجا آوری کر کے لافانی دنیا میں کامیابی کا دلدادہ ہوتا ہے ان تمام صفات کے حامل عبدالستار ایدھی (مرحوم) تھے وہ فخر پاکستان، فرشتہ صفت انسان، بابائے خدمت، لاوارثوں کے وارث، قوم کے مسیحا، سادگی کا پیکر، غریب اور یتیم پرور تھے ان کی اعلیٰ خدمات ہمارے لئے مشعلِ راہ ہیں آئیے ہم سب عہد کریں کہ اسو�ۂحسنہ کی پیروی کر کے اور علماء کرام اور بزرگان دین کے فرمودات پر عمل پیرا ہو کر عوام کی فلاح و بہبود، ہمدردی، حب الوطنی اور پیار و محبت سے سرشار وطن عزیز میں خدمت سر انجام دیں گے اور ملک دشمن عناصر کا قلع قمع کرنے کے لئے ہمہ وقت حکومت وقت اور مسلح افواج کا ساتھ دے کر وطن عزیز کو امن کا گہوارہ بنانے میں پوری قوت صرف کردیں گے دعا ہے کہ دشمنان پاکستان کو خدا تعالیٰ نیست و نابود کردے ۔آمین(رب نواز صدیقی پاک پتن )

مزید :

اداریہ -