2017، ء 16روز میں مختلف الزامات پر سفارشی ایس ایچ اوز سمیت متعدد اہلکاروں کو برطرفی ، معطلی اور دیگر سزائیں

2017، ء 16روز میں مختلف الزامات پر سفارشی ایس ایچ اوز سمیت متعدد اہلکاروں کو ...

  

 لا ہور (اپنے کرا ئم ر پو رٹر سے) صو با ئی دا را لحکومت میں رواں سال کے 16روز کے دوران مختلف تھا نو ں میں تعینا ت سفا رشی ایس ایچ اوزسمیت اہلکا رو ں کو اختیارات سے تجاوز ، کرپشن ، مقدمات کے اندراج میں تاخیر، غیر قانونی حراست، شہریوں سے بد سلوکی اور جرائم پیشہ افراد کی پشت پناہی پر ملازمت سے برطرفی،جبری ریٹائرمنٹ ، سروس کی ضبطگی، معطلی ، سالانہ ترقیاں و پروموشن روکنے ، تنخواہوں میں کمی اور سنشور کی سزائیں دی گئی ہیں۔ پولیس حکام نے پسندیدہ جگہ پر پوسٹنگ کے لئے بوگس کالز کرنے پر سب انسپکٹر محمد وسیم کو ملازمت سے برطرف کر دیا ہے جبکہ سا بق ایس ایچ او قلعہ گجر سنگھ انسپکٹر محمد حسین کو اختیارات سے تجاوز ، شہریوں سے بدسلوکی ، غیر قانونی حراست اور مقدمات کے اندراج میں تاخیر پر30مختلف الزمات کے تحت عہدہ سے تنزلی، 4سال کی سالانہ ترقیاں روکنے،ڈیڑھ سال کی انکریمنٹ ختم کرنے،دو سال تک پروموشن روکنے،3سال کی سروس ضبطگی،دو ماہ کی بیسک پے کی کٹوتی،5ہزار روپے جرمانہ سمیت سنشورز کی سزائیں دے کر جبری ریٹائرکر دیا ہے، اسی طرح سب انسپکٹر محمد اسماعیل کو بھی مختلف الزامات کے تحت جبری ریٹائرکر دیا ہے۔اختیارات سے تجاوز پر ایس ایچ او جوہر ٹاؤن انسپکٹر مقصود علی کی6ماہ کی انکریمنٹ سٹاپ کرنے اورایس ایچ او ہنجر وال انسپکٹر راحیل امجد، سابق ایس ایچ او سول لائنز انسپکٹر اختر حسین،ایس ایچ او ستو کتلہ انسپکٹر ناصر عباس اور ایس ایچ او سا ند ہ انسپکٹر حماد اختر کو مقدمات کے اندراج میں تاخیرپر سنشور کی سزائیں دی ہیں۔ سابق ایس ایچ او ملت پارک انسپکٹر نوید اکمل کو مقدمات کے اندراج میں تاخیر اور اختیارات سے تجاوز پر 6ماہ کی سروس ضبطگی، 6ماہ کی سالانہ ترقی روکنے سمیت دو سال کی ترقی روکنے کی سزائیں دی ہیں۔اسی طرح ناقص کارکردگی اور مقدمات کے اندراج میں تاخیری حربے استعمال کرنے پر سب انسپکٹر امجد علی، ایس ایچ او سرور روڈ سب انسپکٹرعاصم جہانگیر،ایس ایچ او کوٹ لکھپت سب انسپکٹر عمران قمر،ایس ایچ او ڈیفنسA سب انسپکٹر محمد رضا،سابقہ ایس ایچ او مصطفی ٹاؤن سب انسپکٹر شکیل خورشید،ایس ایچ او اقبال ٹاؤن سب انسپکٹر محمد سرور، سب انسپکٹر خورشید احمد، سب انسپکٹر تیمور عباس،ایس ایچ او ٹاؤن شپ سب انسپکٹر احمد عثمان، سب انسپکٹر خورشید احمد، سب انسپکٹر امجد حسین، سب انسپکٹر حماد حسین، سابقہ ایس ایچ او لٹن روڈ سب انسپکٹر امجد جاوید،سابقہ ایس ایچ او سبزہ زار سب انسپکٹر محمد رمضان،سابقہ ایس ایچ او فیکٹری ایریا سب انسپکٹر عاصم رفیع، ایس ایچ گرین ٹاؤن سب انسپکٹر قمر عزیز، ایس ایچ او رنگ محل سب انسپکٹر عاطف رضا، سب انسپکٹر سرور علی، سب انسپکٹر شبیر حسین،ایس ایچ او نولکھا سب انسپکٹر محمد اشفاق،ایس ایچ او سول لائنز سب انسپکٹر رضوان لطیف،سابقہ ایس ایچ او وھدت کالونی سب انسپکٹر وقاص حسین، سابق ایس ایچ او گارڈن ٹاؤن سب انسپکٹر خورشید احمد اور اسسٹنٹ سب انسپکٹر خاد م حسین کو ناقص کارکردگی، مقدمات کے اندراج میں تاخیر، اختیارات سے تجاوز اور شہریوں کو تشدد کا نشانہ بنانے پر ان کی سروس ضبط کرنے، سالانہ ترقیاں روکنے اور جرمانوں سمیت سنشور کی سزائیں دی ہیں۔جونیئر کلرک محمد اختر اور جونیئر کلرک شفیق علی کو غیر حاضری پر پانچ پانچ ہزار روپے جرمانے کی سزا دی ہے۔ ایس ایچ او اقبال ٹاؤن محمد سرور کی سخت سرزنش اور شوکاز نوٹس، سٹریٹ کرائم کی شرح بڑھنے پر ایس ایچ او گلشن اقبال محمد نفیس کی سرزنش اور شوکاز،ناقص ترین سپرویژن پر ڈی ایس پی اقبال ٹاؤن رانا اشفاق کی سخت سرزنش اوران کے خلاف آئی جی دفتر رپورٹ بھیجنے کی ہدایت ، جرائم پر قابو نہ پانے پر ایڈیشنل ایس ایچ او مسلم ٹاؤن عاطف عمران کی سرزنش اور ڈی ایس پی مسلم ٹاؤن سرکل عادل رشید کو کارکردگی بہتر کرنے کی ہدایت ،منشیات فروشی کے خلاف موئثر کارروائی نہ کرنے پر ایس ایچ او وحدت کالونی بابر شوکت کی سخت سرزنش اور آخری موقع ،ناقص کارکردگی پر ایس ایچ او ملت پارک اسد محمود قریشی کی سخت سرزنش،شوکازنوٹس اور ایک سال کی سروس ضبط، جبکہ ناقص کارکردگی پر محرر تھانہ ملت پارک فاروق کو معطل ، ایس ایچ او ساندہ حماد اختراورایس ایچ او گلشن راوی جاوید صدیق کو جرائم پیشہ عناصر کے خلاف سخت کارروائی کی ہدایت ، ناقص کارکردگی پر ایس ایچ او ساندہ حماد اخترکی سرزنش ، تھانہ ساندہ کے تمام بیٹ افسران کو ناقص کاکردگی پر پولیس لائنز تبدیل کرنے کا حکم ،ایس ایچ او نواں کوٹ محمد صدیق اور ایڈیشنل ایس ایچ او شیرا کوٹ نصرت ناگرہ کو جرائم پر قابو پانے کی ہدایت کر دی ۔ایس ایچ او ڈیفنس اے محمد رضا اور ایس ایچ او ڈیفنس بی ضیا الحق کو معطل ، منشیات فروشی کے خلاف موثر کارروائی نہ کرنے پر ایس ایچ او ڈیفنس سی اکرام خان کی سخت سرزنش اور شو کاز نوٹس اور اے ایس پی ڈیفنس سرکل انوش مسعود کو کارکردگی بہتر کرنے کی ہدایت، ایس ایچ او فیکٹری ایریاممتاز علی کو اشتہاری مجرمان گرفتارکرنے کی ہدایت اور آخری موقع، جرائم کی شرح بڑھنے پر ایس ایچ او جنوبی چھاؤنی قمر عباس اور ایس ایچ او شمالی چھاؤنی حسنین فاروق کو کارکردگی بہتر کرنے کی ہدایت ، ناقص سپرویژن پر قائم مقام ڈی ایس پی سرور روڈ سرکل کامران زمان کو بہتر سپرویژن کرنے کی ہدایت ، ناقص کارکردگی پر ایس ایچ او مصطفی آباد جاوید احمد اور ایس ایچ او غازی آباد عقیق احمد کو وارننگ ،جرائم کی شرح بڑھنے پر ایس ایچ او باغبانپورہ یاسر عباس کو معطل ، ناقص کارکردگی پر ایس ایچ او ہربنس پورہ صغیر احمد کو آخری وارننگ اور ڈی ایس پی باغبانپورہ سرکل قیصر مشتاق کو سپرویژن بہتر کرنے کی ہدایت ، ناقص کارکردگی پر ایس ایچ او مناواں نصراللہ کی سرزنش، شو کاز نوٹس اور تھانہ مناواں کے تمام تھانیداروں کو شو کاز نوٹس ، ناقص سپرویژن پر ڈی ایس پی مناواں حسن عزیز میاں کوناراضگی کا مراسلہ اور کارکردگی بہتر کرنے کی ہدایت ، جرائم پر قابو نہ پانے اور وارداتیں بڑھنے پر ایس ایچ او تھانہ ہیئر محمد افضل کی تنزلی ،2شوکا ز نوٹسز اور تمام محافظوں کو جوڈیشل ڈیوٹی بھیجنے کا حکم ، ناقص کارکردگی پر ایس ایچ او ہڈیارہ صفدر عباس کو شو کاز نوٹس کے احکامات جاری کئے ۔من پسند اور پر کشش تھا نو ں میں سفا رشی ایس ایچ از کی تعیناتیوں سے شہر میں کرا ئم گرا ف میں اضا فہ ہوا ہے،اسی وجہ سے گزشتہ 16روز کے اند ر مختلف تھانو ں کے ایس ایچ اوز سمیت اہلکا رو ں کو سزائیں د ی گئی ہیں ۔

مزید :

علاقائی -