سی این جی گیس کی بندش کے خلاف رکشہ یونین کا مظاہروں کا اعلان

سی این جی گیس کی بندش کے خلاف رکشہ یونین کا مظاہروں کا اعلان

  

لاہور(جنرل رپورٹر) عوامی رکشہ یونین پاکستان نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے، سی این جی کی بندش اور پرچی مافیہ کے خلاف احتجاجی مظاہروں کا اعلان کردیا ہے۔غریبوں کے ووٹوں سے منتخب ہونے والے نمائندے مہنگائی کی چکی میں پسنے والی عوام کی آواز اٹھانے کی بجائے اقتدار کی کھینچا تانی میں مصروف ہیں۔ممبران اسمبلی اپنی تنخواہوں میں تین سو فی صد اضافہ کروانے کے بعد بھول چکے ہیں کہ ملک میں کس قدر مہنگائی ہوچکی ہے۔ ان خیالات کا اظہار عوامی رکشہ یونین کے چئیرمین مجید غوری نے فیصل ٹاؤن میں منعقدہ ذمہ داران کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ اب غریب عوام کو ووٹ دینے سے پہلے ہزار بار سوچنا ہے کہ ووٹ سرمایہ داروں کو دیں یا ان کے حقوق کی جنگ لڑنے والے نمائندوں کو چنیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت جب دل چاہتا ہے مہنگائی کر دیتی ہے جبکہ مزدوروں کی آمدنی تو اتنی ہی رہتی ہے۔رکشہ ڈرائیور اب اپنے حقوق کی جدہ جہد کیلئے پر عزم ہیں۔ عوامی رکشہ یونین نے ان میں شعور کی ایک نئی روح پھونک دی ہے۔پڑھے لکھے رکشے ڈرائیوروں کو عہدیدار بنایا جارہا ہے اور رکشہ ڈرائیوروں کے بچوں کو تعلیم دلوانے کیلئے معاونت کی جارہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر 48گھنٹے میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی نہ ہوئی تو عوامی رکشہ یونین شہر کے مختلف حصوں میں احتجاجی مظاہرے کرے گی۔

مزید :

صفحہ آخر -