پاناما کیس میں (ن) لیگ نے تاریخ کا سب سے بڑا یوٹرن لیا : عمران خان

پاناما کیس میں (ن) لیگ نے تاریخ کا سب سے بڑا یوٹرن لیا : عمران خان

  

 اسلام آباد (آن لائن) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ آج تاریخ کا سب سے بڑا یوٹرن دیکھا ۔ یوٹرن میں نے نہیں نواز شریف نے لیا ہے ۔ نواز شریف کے وہم و گمان میں بھی نہیں تھا کہ سپریم کورٹ میں ان کی تلاشی ہو گی ۔ گلی گلی میں شور ہے نواز شریف چور ہے ۔پیر کے روز سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عمران خان نے کہا کہ زندگی میں پہلی بار آج کی سماعت میں شیخ رشید کو خراٹے مارتے سنا ۔ آج کی سماعت کے دوران آدھا سپریم کورٹ سو رہا تھا انہوں نے کہا کہ یوٹرن میں نے نہیں نواز شریف نے لیا ہے اور آج میں نے نواز شریف کا یوٹرن دیکھ لیا کیونکہ نواز شریف نے کہا تھا کہ استعفیٰ نہیں دوں گا احتساب کے لئے تیار ہوں مگر وزیر اعظم کا وکیل کوشش کر رہا ہے کہ سپریم کورٹ اس کیس کو نہ سنے ۔ نواز شریف نے پارلیمنٹ میں غلط بیانی کی اور حکومت بلف کھیلااور پھنس گئی ۔ وزیر اعظم نواز شریف نے منی ٹرائل بچوں پر ڈالا اور بچوں نے قطری شہزادے پر ڈال دیا ۔حکومت بوکھلاہٹ کا شکار ہے کیونکہ نواز شریف کے وہم و گمان میں بھی نہیں تھا کہ معاملہ سپریم کورٹ میں جائے گا اور ان کی تلاشی ہو گی حکومت چاہتی ہے کہ وزیراعظم نے جھوٹ بولا بھی ہے تو عدالت ایکشن نہ لے ۔ حکومت بری طرح پھنس چکی ہے اور پوری قوم انتظار کر رہی ہے کہ منی ٹرائل کب ہو گا اور نواز شریف کو سزا کب ملے گی ۔انہوں نے مزید کہا کہ حکومت میرا منہ بند کرانے کی کوشش نہ کرے ۔ سپریم کورٹ کو جواب دیں ۔2016 تک (ن) لیگ تسلیم ہی نہیں کر رہی تھی کہ فلیٹس ان کی ملکیت ہیں ۔ پانامہ لیکس کے آنے کے بعد انہیں مجبوراً یہ ماننا پڑا کہ فلیٹس ہمارے ہیں اور بی بی سی نے واضح کر دیا ہے کہ یہ فیئر فلٹیس 1993 سے ان کی ملکیت تھے اگر قطری کا خط فراڈ ہے تو اس کا مطلب ہے کہ فلیٹس حسین نواز کے ہیں اور اگر مریم اصلی مالک ہیں تو قطری شہزادے کا خط جعلی ثابت ہو جائے گا ہر طرف سے حکومت پھنس ہوئی ہے اور اب کرپٹ مافیا کو کوئی بچا سکتا اور حکومت کو واضح کرنا ہو گا کہ گلف اسٹیل کا پیسہ پہلے 20 سال کہاں تھا اور اس کی رسیدیں کہاں ہیں ۔اگر حکومت سچی ہے تو برطانوی نشریاتی ادارے اور آئی سی آئی جے کے خلاف کیس کیوں نہیں کراتی ۔ اب نواز شریف کی مورل اتھارٹی ختم ہو چکی ہے اور بہت جلد عوام کو خوشخبری ملنے والی ہے ۔ نواز شریف اخلاقی طور پر وزیر اعظم کے رہنے کا اخلاقی جواز کھو چکے ہیں ۔

عمران خان

مزید :

صفحہ اول -