اسفند یارولی کے زیر اصدارت اجلاس ، دہشتگردی مقدمات بارے میں ای پی سی پلانے کا مطالبہ

اسفند یارولی کے زیر اصدارت اجلاس ، دہشتگردی مقدمات بارے میں ای پی سی پلانے ...

  

چارسدہ (بیورو رپورٹ)اسفند یار ولی خان کی صدارت میں اے این پی کے تھنک ٹینک کا غیر معمولی اجلاس ۔وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف سے دہشت گردی کے مقدمات کی سماعت کے لئے عدالتی نظام پر فوری طور پر آل پارٹی کانفرنس بلانے کا مطالبہ ۔ خطے میں امن کی قیام کیلئے نئے کوششوں اور افغانستان میں قیام امن کیلئے مذاکراتی عمل میں افغانوں کی شرکت یقینی بنانے کابھی مطالبہ ۔ مردم شمار ی میں فاٹا کے عوام کی غلط اعداد و شمار پیش کرنے اور فاٹا کے عوام کی حق تلفی پر شدید تحفظات کا اظہار ۔ تفصیلات کے مطابق ولی باغ چارسدہ میں اسفند یار ولی خان کی صدارت میں اے این پی کے تھنک ٹینکس کاغیر معمولی اجلاس منعقد ہو ا۔ اجلاس میں پارٹی کے جنرل سیکرٹری میاں افتخار حسین ، سینٹرز افراسیاب خٹک ، ذاہد خان ، شگفتہ ملک ، لطیف آفریدی ، امیر حیدر خان ہوتی ، سید عاقل شاہ ، بشیر خان مٹہ ، واجد علی خان ، ارباب نجیب اللہ، بشری ٰ گوہر اور دیگر نے شرکت کی ۔ اجلاس میں ملک کے موجودہ سیاسی صورتحال اور تنظیمی امور پر تفصیلی غور وحوض کیا گیا ۔ اجلاس میں فاٹا کو خیبر پختونخوا میں ادغام کو ضروری قرار دیا گیا اور فاٹا سمیت ملک بھر میں جلد از جلد مردم شماری کیلئے راہ ہموار کرنے کا مطالبہ کیا گیا ۔ اجلاس میں پاکستان اور خطے کی مجموعی صورتحال اور آمن کے قیام کیلئے پارٹی موقف کی منظوری دی گئی ۔ اجلاس میں افغانستان اور خطے میں قیام آمن کیلئے نئی کوششوں پر زور دیا گیا اور افغانستان میں قیام آمن کیلئے افغانوں کی شرکت اور منظوری کو ضروری قرار دیاگیا تاکہ پورے خطے میں پائیدار آمن کا قیام ممکن ہوسکے ۔ اجلاس میں مطالبہ کیا گیا کہ فاٹا میں مردم شماری کیلئے راہ ہموار کی جائے کیونکہ فاٹا کے عوام کی غلط اعداد و شمار کے نتیجے میں ان کو اسمبلیوں میں نمائندگی اور این ایف سی ایوارڈ میں بہت کم حصہ ملتا ہے جس سے ان کی حق تلفی ہو رہی ہے اور اے این پی اس صورتحال کو کسی صورت قبول نہیں کر سکتی ۔ اے این پی مستقبل قریب میں فاٹا کیلئے ایک بڑے اقتصادی پیکج اور مالی وسائل کی فراہمی یقینی بنائیگی تا کہ فاٹا کے عوام کی محرومیوں کا ازالہ کیا جا سکے ۔اجلاس میں وزیر ستان اور دیگر علاقوں کو واپس جانے والے آئی ڈی پیز کی حالت زار پر سخت تشویش کا اظہار کیا گیا اور حکومت کو اس حوالے سے اپنی ذمہ داریاں بطریقہ احسن پوری کرنے کا مطالبہ کیا گیا۔ اجلاس میں وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف سے مطالبہ کیا گیا کہ دہشت گردی کے مقدمات کی سماعت کے حوالے سے عدالتی نظام پر فوری طور پر آل پارٹیز کانفرنس بلائی جائے تاکہ وہ تمام سیاسی جماعتوں کے موقف سے آگاہ ہو سکے ۔اجلاس میں انتخابی اصلاحات کے حوالے سے پارٹی کے سفارشات کی منظوری دی گئی جس سے پارلیمانی کمیٹی کے اجلاس میں پیش کیا جائیگا۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -