تحریک جعفریہ کبھی دہشتگردی میں ملوث نہیں رہی ،علامہ ناظر عباس

تحریک جعفریہ کبھی دہشتگردی میں ملوث نہیں رہی ،علامہ ناظر عباس

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)شیعہ علماء کو نسل صوبہ سندھ کے صدر علامہ سیدناظر عباس تقوی کاصوبائی دفتر سے جاری بیان میں کہنا ہے کہ گز شتہ دنوں وفا قی وزیر داخلہ کی طرف سے دئیے جانے والا بیان انتہائی افسوس ناک ہے کہ ایک محب وطن جماعت تحریک جعفر یہ اور اُس کے سر براہ قائد ملت جعفر یہ علامہ سید ساجد علی نقوی کوایسے لوگوں اور گروہ کے ساتھ لاکھڑاکرنا کہ جن کے لئے حکومت اور احساس اداروں کی یہ رپورٹ ہے کہ یہ جماعتیں ملک میں فر قہ واریت اور دہشت گردی میں ملوث ہیں یہ نا انصافی ہے تحر یک جعفر یہ پاکستان کا نہ ماضی میں کبھی دہشت گر دی سے تعلق رہا ہے اور نہ ہے بلکہ علا مہ سید ساجد علی نقوی نے ہمیشہ دہشت گردی کی نفی کی ہے اور امت مسلمہ میں اتحاد اور وحدت کی مثالی فضاء قائم کی ہے اور آج ملک میں تمام مسلک کہ درمیان جو اتحاد و وحدت کی فضاء پائی جاتی ہے وہ علامہ سید ساجد علی نقوی کی مثبت پالیسیوں کا نتیجہ ہے کہ آج ہر مسلک کا شخص علامہ ساجدعلی نقوی کو احترام کی نگاہ سے دیکھتا ہے ایسے شخص کی جماعت تحر یک جعفر یہ کو کالعدم قرار دینا اور دہشت گردو سے جوڑنا بیلسنگ پالیسی کا نتیجہ ہے جو ایک افسوس ناک عمل ہے لہذا انصاف کے تقاضوں کو پورا کر تے ہوئے بلا جواز پابندی کو ختم کیا جائے تاکہ تشیع کی نمائندہ جماعت ملک میں اپنا مثبت سیا سی اور جمہوری کردار ادا کرتے ہوئے ملک کی ترقی اور بہتری کے لئے اقدامات کر سکے جنرل مشرف کہ دور حکومت میں تحر یک جعفر یہ پاکستان پر پاپندی لگا نا آمرانہ اقدام تھا اور یہ آمرانہ دور اُس کی حکومت کے ساتھ ہی ختم ہوگیا

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -