اثاثوں کی تفصیلات جمع نہ کرانے پر ڈپٹی سپیکر ، فواد ، شہریار ، احسن اقبال سمیت 332ارکان اسمبلی کی رکنیت معطل

اثاثوں کی تفصیلات جمع نہ کرانے پر ڈپٹی سپیکر ، فواد ، شہریار ، احسن اقبال ...

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر)الیکشن کمیشن نے اثاثوں کی تفصیلات جمع نہ کرانے پر ڈپٹی سپیکر قومی اسمبلی ،وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری اور اوراپوزیشن رہنماء احسن اقبال سمیت 332ارکان پارلیمنٹ کی رکنیت معطل کر دی۔قومی اسمبلی کے 72اورسینیٹ کے 20 ارکان کی رکنیت معطل کی گئی ہے جبکہ پنجاب اسمبلی کے 115،سندھ کے 52 ،خیبرپختونخواکے 54،بلوچستان کے 19 ارکان کی رکنیت معطل کی گئی ہے، معطل ارکان میں وزیر مملکت برائے داخلہ شہریار آفریدی ، وفاقی وزیر برائے امور کشمیر وگلگت بلتستان علی امین خان ، وزیر قومی صحت عامر محمود کیانی ، وزیر برائے ہاؤسنگ اینڈ ورکس طارق بشیر چیمہ، احسن اقبال اور اخترمینگل بھی شامل ہیں ۔تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن نے 332 ارکان اسمبلی کی رکنیت معطل کردی ہے ،ارکان کی رکنیت اثاثوں کی تفصیلات جمع نہ کرانے پر معطل کی گئی ۔ قومی اسمبلی کے معطل ارکان میں شہریار آفریدی ،علی امین خان ، قاسم خان سوری ، اختر مینگل ، شزا فاطمہ خواجہ ، مائزہ حمید، محسن جاوید ، علی نواز اعوان ، عامر محمود کیانی ، صداقت علی خان ، فوادچودھری ،احسن اقبال،حسین الٰہی، طارق بشیر چیمہ ،خواجہ شیراز محمود بھی شامل ہیں جبکہ سندھ اسمبلی کے معطل ارکان میں جام خان شورو، شرجیل انعام میمن ، میر اللہ بخش تالپور بھی شامل ہیں ۔پنجاب اسمبلی کے رکن مجتبیٰ شجاع الرحمن ، بلال یاسین ، ملک محمد احمد خان ، محمد ہاشم ڈوگر سمیت 115ارکان کی رکنیت معطل کی گئی ہے ۔خیبرپختونخواسمبلی کے رکن شوکت علی یوسفزئی ، بابر سلیم سواتی ، فیصل زمان سمیت 54ارکان کی رکنیت معطل کی گئی ہے ۔بلوچستان اسمبلی کے رکن طارق مگسی، سردار یار محمد رند اور اصغر خان سمیت 19ارکان کی رکنیت معطل کی گئی ہے ۔ جبکہ سینیٹ کے معطل ہونے والے ارکان میں راحیلہ مگسی ، مصدق ملک ، شہزاد وسیم ، اسحاق ڈار، ستارہ ایاز ،سرفراز بگٹی ، بہرہ مند ، مہر تاج روغانی ، محمد اکرم ، انوار الحق ، سردار محمد شفیق ترین بھی شامل ہیں ۔

رکنیت معطل

مزید : صفحہ اول