چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثارنے اپنے کیریئر کے آخری کیس کا فیصلہ سنا دیا ، کونسا کیس ہے ؟جانئے

چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثارنے اپنے کیریئر کے آخری کیس کا فیصلہ سنا دیا ...
چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثارنے اپنے کیریئر کے آخری کیس کا فیصلہ سنا دیا ، کونسا کیس ہے ؟جانئے

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ آف پاکستان نے اٹھارہویں ترمیم کے بعد شیخ زید ہسپتال صوبائی حکومت کو دینے کے معاملے پر فیصلہ سنا دیا،چیف جسٹس پاکستان کی سربراہی میں 5 رکنی بنچ نے اکثریتی فیصلہ سنایا،سپریم کورٹ نے شیخ زید ہسپتال وفاق کے حوالے کردیا ۔

چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثارنے اپنے کیریئر کے آخری کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ آپ سب کی محبتوں کا بہت شکریہ ،20 سال تک بینچ کا حصہ رہا لیکن کبھی کسی کی دل آزاری نہیں کی ،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ کسی کی دل آزاری ہوئی تو معافی مانگتاہوں ،چیف جسٹس پاکستان آخری مقدمہ سن کر عدالت سے چلے گئے ۔

تفصیلات کے مطابق اٹھارہویں ترمیم کے بعد شیخ زید ہسپتال صوبائی حکومت کودینے کامعاملے پر چیف جسٹس پاکستان کی سربراہی میں 5 رکنی بنچ نے اکثریتی فیصلہ فیصلہ سنا دیا،عدالت نے شیخ زید ہسپتال وفاق کے حوالے کردیا ،بنچ کے رکن جسٹس مقبول باقرنے اکثریتی فیصلے سے اختلاف کیا۔

عدالت نے اپنے فیصلے میں کہا ہے کہ ہسپتال کسی قانونی اقدام کے بغیرصوبے کے حوالے کیاگیا،ہسپتال کی منتقلی کیلئے مطلوبہ قانونی اقدامات نہیں اٹھائے گئے،اس معاملے میں 18 ویں ترمیم کی غلط تشریح کی گئی۔

عدالت نے فیصلے میں کہا ہے کہ کراچی کے 3 ہسپتال اورمیوزیم بھی غیرقانونی طورپرصوبے کودیئے گئے،عدالت نے کہا ہے کہ4 ہسپتال اورمیوزیم کاانتظام 90 روزمیں وفاق کودیاجائے،صوبہ وقت میں توسیع کی درخواست دے سکتاہے،عدالتی فیصلے میں کہا گیا ہے کہ وفاق صوبوں کومتعلقہ ہسپتالوں کے ایک سالہ اخراجات دے،سپریم کورٹ نے ہسپتال منتقلی کامعاملہ نمٹادیا ۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد