”لوگ کہتے ہیں کہ پرویز الہٰی کو وزیر اعلیٰ بنادو تو ان کوبڑی تکلیف ہوتی ہے“ ق لیگ کے کامل علی آغا کا صبر کا پیمانہ لبریز ہونے کاعندیہ

”لوگ کہتے ہیں کہ پرویز الہٰی کو وزیر اعلیٰ بنادو تو ان کوبڑی تکلیف ہوتی ہے“ ...
”لوگ کہتے ہیں کہ پرویز الہٰی کو وزیر اعلیٰ بنادو تو ان کوبڑی تکلیف ہوتی ہے“ ق لیگ کے کامل علی آغا کا صبر کا پیمانہ لبریز ہونے کاعندیہ

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)مسلم لیگ ق کے سینیٹر کامل علی آغا نے کہاہے کہ پنجاب میں بیڈ گورننس بڑھتی جارہی ہے ،ہمارے صبر کا پیمانہ لبریز ہوچکاہے ،جب لوگ کہتے ہیں کہ پرویز الہٰی کو وزیر اعلیٰ بنادو تو ان کوبڑی تکلیف ہوتی ہے ۔

جیو نیوز کے پروگرام ”آج شاہ زیب خانزادہ کے ساتھ“میں گفتگو کرتے ہوئے کامل علی آغا نے کہا کہ پنجاب میں بیڈ گورننس بڑھتی جارہی ہے اور اس کی وجہ مشاورت نہیں ہے ، ہمارے پاس تجربہ کار قیادت ہے ، ہمارے پر تجربہ ہے اور اس کے باوجود یہ ہم سے مشاورت نہیں کرتے تو ان کے خلوص پر سوالیہ نشان ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جب ان پر بڑی بڑی مصیبتیں آتی ہیں تو یہ ہم سے بات کرتے ہیں لیکن دیگر مسائل پر ہم سے بات نہیں کرتے ۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت بڑے بڑے چور ، ڈاکو اور لٹیرے خود کو سادھو بنا کر پیش کررہے ہیں تو یہ کس کی ناکامی ہے ؟ اس کی وجہ صرف یہ ہے کہ ہمارے ساتھ مشاورت نہیں کی جارہی ۔

کامل علی آغا کا کہنا تھا کہ عثمان بزدار شریف آدمی ہے ، اس کا کیا قصور ہے ؟ اس کو وزیر اعظم نے چنا ہوا ہے اور وہ بیٹھا ہوا ہے لیکن جب لوگ کہتے ہیں کہ پرویز الہٰی کو وزیر اعلیٰ بنادو تو ان کوبڑی تکلیف ہوتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے صبر کا پیمانہ لبریز ہوچکاہے لیکن ہم اس کے باوجود اپنی اس روایت کی وجہ سے حکومت کا ساتھ نہیں چھوڑ رہے کہ ہم دوستوں کے دوست ہیں اور ہنڈیا کو بیچ چوراہے پر نہیں پھوڑتے ۔اگر اقتصادی عشاریے ٹھیک ہوچکے ہیں تو ہم کونظر کیوں نہیں آرہے ؟ ہم چاہتے کہ عوام کو ریلیف ملے اور ہم جب الیکشن میں جائیں تو سرخرو ہوکرجائیں ۔

مزید : قومی