حکومت کاکاﺅنٹ ڈاﺅن شروع ہوچکا ہے،چودھری محمدالطاف

حکومت کاکاﺅنٹ ڈاﺅن شروع ہوچکا ہے،چودھری محمدالطاف

  

لاہور(پ ر)آل پاکستان مسلم لیگ برطانیہ کے مرکزی صدر چودھری محمدالطاف شاہدنے کہا ہے کہ جھرلو حکومت کاکاﺅنٹ ڈاﺅن شروع ہوچکا ہے۔نوازشریف کوجس مینڈیٹ کازعم ہے وہ دوسروں کاچوری کیا گیا۔پچھلی چار دہائیوں میں 2002ءاور2007ءکے شفاف انتخابات کاکریڈٹ پرویز مشرف کوجاتا ہے،لگتا ہے شفافیت اورجمہوریت بھی پرویز مشرف کے ساتھ چلی گئی۔آج کی نسبت پرویزمشرف کادورحکومت زیادہ جمہوری تھا،پرویزمشرف نے مشاورت اورمفاہمت کوفروغ دیاجبکہ شریف برادران اپوزیشن کودیوار سے لگانے کے درپے ہیں۔اپوزیشن کی بجائے مغل اعظم کی اناتعمیروترقی اورمفاہمت کی راہ میں حائل ہے۔وہ ایک افطارپارٹی سے خطاب کررہے تھے۔چودھری تبریز، اورھا چودھری ،پرویز نایاب زیدی ،نعیم عباس ،سیّدشان عابدی ،سیّدعلی جعفری ،عمران طاہررضوی،اورسیّدسلمان اکبرنے بھی خطاب کیا ۔چودھری محمدالطاف شاہد نے مزید کہا کہ اللہ تعالیٰ سے دعا ہے14اگست کاسورج بدعنوان اورنااہل حکومت سے آزادی کاپیغام لے کر طلوع ہو ۔نوازلیگ کے سواکسی جمہوری سیاسی جماعت کو11مئی2013ءکے انتخابی نتائج پراعتماد نہیں ۔

لہٰذاءان اسمبلیوں کی کوئی اخلاقی حیثیت نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں پرویز مشرف کی قیادت میں گرینڈ الائنس کاقیام اور مڈٹرم الیکشن خارج ازامکان نہیں۔جوحکمران خودگھرجانے کی جلدی میں ہوں انہیں کون روک سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ اگر ملک میں جمہوریت ہوتی توایک سال بعد تبدیلی کیلئے تحریک شروع نہ ہوتی ۔حکمران جماعت موروثیت کی بدنماعلامت اوریہ موروثی کلچر جمہوریت کیخلاف کینسر سے زیادہ خطرناک ہے ۔انہوں نے کہا کہ شریف برادران اپنے خاندان کے افراد کے سواکسی دوسرے پراعتماد نہیں کرتے ۔انہوں نے کہا کہ پرویزمشرف کے دورحکومت میں ان کاکوئی عزیز رشتہ دارکسی سرکاری عہدے پربراجمان نہیں تھا ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -