ٰداعش کے سربراہ کی اہلیہ بھی منظرعام پر آگئیں

ٰداعش کے سربراہ کی اہلیہ بھی منظرعام پر آگئیں
ٰداعش کے سربراہ کی اہلیہ بھی منظرعام پر آگئیں

  

بغداد(مانیٹرنگ ڈیسک) عراق و شام میںسرگرم عسکریت پسند تنظیم ISISکے سربراہ ابو بکر البغدادی کی اہلیہ بھی نظر عام پر آ گئی ہے اور وہ شام میں باغیوں کے ہاں قید رہ چکی ہے ، بغدادی کی اہلیہ کا پہلا  شوہر شام میں فوج سے تصادم میں مارا جا چکا ہے ۔

عرب میڈیا کے مطابق ابو بکر البغدادی کی اہلیہ سجی الدلائمی کا ذکر پہلی مرتبہ اس وقت منظر عام پر آیا جب ایک شامی قصبے میں فروری کے دوران اغواءکی گئی مسیحی راہباوں کو مارچ میں رہا کیا گیا تھا،ان راہباﺅں کو صدر بشارالاسد کی حکومت کے ساتھ معاہدے کے تحت رہا کیا گیا تھا اور بدلے میں صدر بشارالاسد نے اسلامی جنگجوﺅں کی زیر حراست حامی خواتین کو رہا کرنا منظور کیا تھا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اس موقع پر سجی الدلائمی کی شناخت پہلی مرتبہ ابو مان السوری نے النصرہ کے ابو بکر البغدادی کی اہلیہ کے طور پر کرائی اور بتایا کہ وہ بھی ان زیر حراست خواتین میں شامل ہے جنہیں بدلے میں اسد حکومت رہا کر رہی ہے۔

یہ بھی کہا گیا ہے کہ دلائمی اپنے دو بچوں اور ایک چھوٹے بھائی کے ہمراہ گرفتار تھی۔ دلائمی کے حوالے سے مزید معلوم ہوا ہے کہ اس کا پہلا شوہرعراقی تنظیم راشدین کے اہم لوگوں میں سے ایک تھا اور اس کا نام فلاح اسماعیل جاسم تھا۔اسماعیل جاسم کو 2010ءمیں عراقی فوج نے صوبہ انبار میں ہلاک کر دیا تھا۔ دلائمی کا پورا خاندان داعش سے نظریاتی طور پر وابستہ رہا ہے جبکہ اس کا والد ابراہیم دلائمی شام میں داعش کا امیر تھا، جسے ستمبر 2013 ءمیں شامی فوج سے تصادم کے دوران ہلاک کیا گیا تھا۔

اسی طرح دلائمی کی ہمشیرہ دعا کے حوالے سے بعض میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ اس نے اپریل کے دوران کردوں کی ایک ریلی میں خود کش دھماکہ کیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -