فرائی چکس کے جعلی فوڈ پوائنٹ بند ،سرکاری محکموں نے لوگوں کو بھی حکم عدولی سکھا دی،ہائی کورٹ

فرائی چکس کے جعلی فوڈ پوائنٹ بند ،سرکاری محکموں نے لوگوں کو بھی حکم عدولی ...
فرائی چکس کے جعلی فوڈ پوائنٹ بند ،سرکاری محکموں نے لوگوں کو بھی حکم عدولی سکھا دی،ہائی کورٹ

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے پنجاب بھر میں فرائی چکس کے ٹریڈ مارک اور نام کاغلط استعمال کرنے والے فوڈ پوائنٹ اورآﺅٹ لیٹس بند کرنے کا حکم دے دیا،مسٹر جسٹس فرخ عرفان خان نے ریمارکس دیئے ہیں کہ سرکاری محکموں نے عام افراد کو بھی عدالتی احکامات نظرانداز کرنا سکھا دیاہے، یہ رویہ برداشت نہیں کیا جا سکتا ۔عدالت میں درخواست گزار کے وکیل نعمان عتیق نے موقف اختیار کیا کہ فرائی چکس کا ٹریڈ مارک اور نام استعمال کر کے حسنین مہدی نامی شخص کی ایک دوسری فوڈ کمپنی صارفین کو دھوکہ دے رہی ہے اور اسی نام سے پنجاب بھر میں غیرقانونی طور پر کاروبارکر رہی ہے ، ہائیکورٹ نے اپنے فیصلے میں بھی جعلی کمپنی کو فرائی چکس کا نام، ٹریڈ مارک، لوگو اور کلر سکیم استعمال کرنے سے روکتے ہوئے کہا تھا کہ دوسری کمپنی اپنا الگ سے ٹریڈ مارک اور لوگو بنواکر کام کریںمگر اس کے باوجود حسنین مہدی نامی شخص پنجاب بھر میں جعلسازی کررہا ہے اور مختلف آﺅٹ لیٹس قائم کی جا رہی ہیں، عدالتی حکم پر لوکل کمیشن نے رپورٹ پیش کرتے ہوئے تصدیق کی کہ صفانوالہ چوک میں آﺅٹ لٹ بنوا کر فرائی چکس کا نام استعمال کر کے صارفین کو دھوکہ دیا جا رہا ہے مگر یہ آﺅٹ لٹ حسنین مہدی کی ملکیت نہیں ہے، فاضل جج نے عدالتی حکم کی خلاف ورزی کا سخت نوٹس لیتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ سرکاری محکموں نے عام افراد کو بھی عدالتی احکامات نظرانداز کرنا سکھا دیا ہے ، یہ رویہ برداشت نہیں کیا جا سکتا، فاضل جج نے کمرہ عدالت میں موجود حسنین مہدی کی سرزنش کرتے ہوئے انہیں حکم دیا کہ 23جولائی تک ان کی نگرانی میں چلنے والے تما م آﺅٹ لٹس اور فوڈ پوائنٹ بند کر دئیے جائیں یا اپنے فوڈ پوائنٹس کا ٹریڈ مارک، لوگو، کلر سکیم اور الفاظ تبدیل کر کے رپورٹ عدالت میں پیش کی جائے، عدالت نے قرار دیا کہ یہ معاملہ 2 برسوں سے زیر التواءچلا آ رہا ہے اور مخالف فریق حسنین مہدی مسلسل عدالت کو چکمہ دے رہا ہے ، اگر آئندہ سماعت تک عدالتی حکم پر عملدرآمد نہ ہوا تو اسے جیل بھیج دیا جائے گا۔

مزید :

لاہور -