ایران سے ایٹمی معاہدہ شمالی کوریا سے بھی بدتر ہے: شہزادہ بندر

ایران سے ایٹمی معاہدہ شمالی کوریا سے بھی بدتر ہے: شہزادہ بندر
ایران سے ایٹمی معاہدہ شمالی کوریا سے بھی بدتر ہے: شہزادہ بندر

  

لندن (ویب ڈیسک) سعودی عرب کے واشنگٹن میں سابق سفیر اور سابق انٹیلی جنس چیف شہزادہ بندر بن سلطان نے کہا ہے کہ امریکہ نے شمالی کوریا طرز کی صورتحال پیدا ہونے کی پیشن گوئیوں کے باوجود ایران کے ساتھ جوہری تنازع پر معاہدہ کرلیا ہے۔ انہوں نے لندن سے تعلق رکھنے والی عربی کی نیوز ویب سائٹ الف پر شائع ہونے والے ایک کالم میں خبردار کیا ہے کہ ایران سے نیوکلیئر ڈیل مشرق وسطیٰ میں تباہی کا پیش خیمہ ثابت ہوگی۔ شہزادہ بندر نے لکھا ہے کہ میڈیا اور سیاست کے سنجیدہ پنڈت صدر اوباما کی ایران سے ڈیل کو سابق صدر بل کلنٹن کی شمالی کوریا کے ساتھ ڈیل سے بھی بدتر قرار دے رہے ہیں۔ اوباما نے تزویراتی خارجہ پالیسی تجزیے، قومی انٹیلی جنس کی معلومات اور خطے میں امریکی اتحادیوں کی انٹیلی جنس کے باوجود ایران کےس اتھ ڈیل کی ہے حالانکہ ایران کو اربوں ڈالرز تک رسائی حاصل ہوجائے گی۔ انہوں نے لکھا ہے کہ میں اپنے دوست ہینری کسنجر کی اس بات کا پہلے سے بھی زیادہ قائل ہوگیا ہوں، جب وہ یہ کہتے ہیں کہ امریکا کے دشمنوں کو امریکا سے خوف کھانا چاہیے لیکن امریکا کے دوستوں کو امریکا سے زیادہ خوف زدہ ہونا چاہیے۔

مزید :

بین الاقوامی -