قندیل کے قتل پر بہت دکھ ہوا، لڑکی پاکستان میں ہو یا کہیں اور اسے آزادی سے جینے کا حق حاصل ہونا چاہئے: راکھی ساونت

قندیل کے قتل پر بہت دکھ ہوا، لڑکی پاکستان میں ہو یا کہیں اور اسے آزادی سے جینے ...
قندیل کے قتل پر بہت دکھ ہوا، لڑکی پاکستان میں ہو یا کہیں اور اسے آزادی سے جینے کا حق حاصل ہونا چاہئے: راکھی ساونت

  

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی اداکارہ راکھی ساونت نے ماڈل قندیل بلوچ کے قتل پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے یہ بہت ہی شرمناک بات ہے کہ بیٹی کو کہیں پر بھی نہیں جینے دیا جاتا ۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

نجی ٹی وی دنیا نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے راکھی ساونت نے کہا کہ ”بیچاری قندیل بلوچ کا کیا قصور تھا؟وہ ایکٹریس اور ماڈل بننا چاہتی تھی، بگ باس میں آنا چاہتی تھی ، ہیروئن بننا چاہتی تھی۔ ہر لڑکی پائلٹ نہیں بن سکتی، ہر لڑکی سیاستدان نہیں بن سکتی، میں خدا پر یقین رکھتی ہوں جس نے ہر کسی کو الگ الگ صلاحیتوں سے نوازا ہے۔ ہر شخص کا جینے کا طریقہ ہوتا الگ ہوتا ہے اور قندیل کا جینے کا طریقہ بھی الگ تھا۔“

روزنامہ پاکستان کی خبریں اپنے ای میل آئی ڈی پر حاصل کرنے اور سبسکرپشن کیلئے یہاں کلک کریں

راکھی ساونت نے کہا کہ مجھے بہت دکھ ہو رہا ہے یہ کہتے ہوئے کہ ایک بھائی نے اپنی بہن کو مارا کیوں ؟ کیونکہ وہ آزادی سے جینا چاہتی تھی ، اس کے خیالات الگ تھے ، لڑکی پاکستان میں ہو یا دنیا کے کسی بھی کونے میں، اسے آزادی سے جینے کا حق حاصل ہونا چاہئے۔

مزید :

تفریح -