انڈونیشین خاتون کی محبت کی شادی لیکن کئی ماہ بعد بھی شوہر کا قربت سے گریز، بالآخر حقیقت سامنے آئی تو زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا، شوہر کون تھا؟ جان کر آپ بھی چکراجائیں گے

انڈونیشین خاتون کی محبت کی شادی لیکن کئی ماہ بعد بھی شوہر کا قربت سے گریز، ...
انڈونیشین خاتون کی محبت کی شادی لیکن کئی ماہ بعد بھی شوہر کا قربت سے گریز، بالآخر حقیقت سامنے آئی تو زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا، شوہر کون تھا؟ جان کر آپ بھی چکراجائیں گے

  

جکارتہ(مانیٹرنگ ڈیسک) انڈونیشیاءمیں ایک لڑکی نے اپنی پسند کے مرد سے محبت کی شادی کی مگر کئی ماہ گزرنے کے باوجود اس کا شوہر اس کے قریب نہ آیا، اور بالآخر ایک روز خاتون پر ایسی حقیقت آشکار ہوئی کہ اسے زندگی کا سب سے بڑا جھٹکا لگ گیا۔ برطانوی اخبار ڈیلی میل کی رپورٹ کے مطابق ہینیاتی (Heniyati)نامی اس 25سالہ لڑکی سے مرد بن کر شادی کرنے والا دراصل خود 40سال عمر کی عورت تھی، جس کا نام سوارتی (Suwarti)تھا اور وہ ایک 17سالہ بیٹے کی ماں بھی تھی۔سوارتی جب پہلی بار ہینیاتی سے ملی تو اس نے خود کو مرد ظاہر کیا اور اپنا نام محمد ایفندی سپوترا (Muhamad Efendi Saputra) بتایااور کہا کہ وہ ایک پولیس افسر ہے۔ کچھ عرصہ تک دونوں میں محبت پروان چڑھتی رہی اور بالآخر دونوں نے جاوا نامی جزیرے پر شادی کی تقریب منعقد کی اور رشتہ ازدواج میں منسلک ہو گئے۔

سوشل میڈیا پر تصویر پر صارفین کے اخلاق باختہ تبصرے، اداکارہ نے ایسا جواب دے دیا کہ ایک جملے نے ہی سب کو چپ کردیا، سب کے منہ کھلے کے کھلے رہ گئے

رپورٹ کے مطابق سوارتی کچھ لوگوں کو اپنا فرضی رشتہ دار بنا کر شادی کی تقریب میں لائی تاکہ ہینیاتی کو شک نہ گزرے۔ اس نے ان جعلی رشتہ داروں کو اس کام کے عوض رقم دی تھی۔ اس جعلی دولہے نے ہینیاتی سے شادی تو کر لی تھی مگر شادی کے بعد مسلسل اپنی دلہن کے قریب جانے اور جسمانی تعلق قائم کرنے سے انکار کرتا چلا آ رہا تھا جس پر ہینیاتی پہلے ہی شک میں مبتلا تھی۔ پھر ایک روز سوارتی کے پرس میں اس نے اس کا شناختی کارڈ دیکھ لیا جس پر اس کی اصل جنس درج تھی۔ اس انکشاف پر ہینیاتی نے پولیس کو اطلاع دے دی جنہوں نے اسے گرفتار کر لیا۔ پولیس کے مطابق اس حوالے سے مزید تحقیقات جاری ہیں اور یہ پتہ چلانے کی کوشش کی جا رہی ہے کہ سوارتی نے یہ فراڈ کیوں کیا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -