ہاؤسنگ سوسائٹی کیلئے مختص 22ایکڑ اراضی پر قبضے کے خلاف سپریم کورٹ نے جواب طلب کرلیا

17 جولائی 2018 (11:27)

کراچی( ویب ڈیسک) سپریم کورٹ نے گلشن اسلام کو آپریٹیو ہاؤسنگ سوسائٹی کی 22 ایکڑ اراضی پر قبضے کے خلاف درخواست پرسیکرٹری لینڈ یوٹیلائزیشن سے تفصیلی جواب طلب کرلیا ہے۔پیر کو سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں گلشن اسلام کو آپریٹیو ہاؤسنگ سوسائٹی کی 22 ایکڑ اراضی پر قبضے سے متعلق سماعت ہوئی۔

اس موقع پر درخواست گزار کے وکیل نے موقف اپنایا 1980 میں سپر ہائی وے پر ہاؤسنگ سوسائٹی کے لیے اراضی مختص کی گئی۔ 22 سال قبل بورڈ آف ریونیو نے متبادل جگہ فراہم کرنے کی یقین دہانی کرائی۔ بورڈ آف ریونیو کو قبضے ختم کرنے یا متبادل جگہ کی فراہمی کی ہدایت دی جائے۔ عدالت میں سیکرٹری لینڈ یوٹیلائزیشن نے اعتراف کیا کہ الاٹمنٹ کے بعد 22 ایکڑ اراضی پر قبضہ کرکے فیکٹریاں بنا دی گئیں۔ مذکورہ اراضی پر فیکٹریاں قبضہ ختم کرنے کو تیار نہیں۔ عدالت نے سیکرٹری لینڈ یوٹیلائزیشن سے تفصیلی جواب جمع کرانے کی ہدایت کرتے ہوئے سماعت ملتوی کردی۔

مزیدخبریں