ڈسٹرکٹ ہسپتال وہاڑی ‘ ادویات خریداری میں کرپشن ‘ ذمہ داروں کیخلاف شکنجہ تیار

  ڈسٹرکٹ ہسپتال وہاڑی ‘ ادویات خریداری میں کرپشن ‘ ذمہ داروں کیخلاف شکنجہ ...

  

وہاڑی(بیورورپورٹ ;228;نمائندہ خصوصی )وزیر اعلی کے حکم پر سپیشل سیکرٹری پی اینڈ ایس ایچ ڈیپارٹمنٹ نے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال وہاڑی میں ادویات کی خریداری میں گھپلوں اوران کی غفلت کے باعث کروڑوں روپے کی ادویات ایکسپائر ہونے پر 5سابق میڈیکل سپرٹنڈٹ،2سابق(بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

فارماسسٹ اور 2 سابق سٹور کیپر کے خلاف انکوائری شروع ۔ تفصیل کے مطابق ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال وہاڑی میں تعینات رہنے والے سابق و ریٹائرڈ ایم ایس ڈاکٹر محمد اشرف،سابق ایم ایس ڈاکٹر شاہد سلیم،سابق ریٹائرڈ ایم ایس ڈاکٹر غضنفر عباس دھرالہ،سابق ایم ایس ڈاکٹر محمد ابرار اقبال،سابق ایم ایس ڈاکٹر محمد فاروق، سابق فارماسسٹ خلیق انور،سابق فارماسسٹ حافظ ثاقب ذکاء اور 2 سابق سٹور کیپرز خالد محمود اور عبدالقیوم شاہد کو وزیر اعلی کے حکم پر اپنی ڈسٹرکٹ ہیڈکوارٹرہسپتال وہاڑی میں تعیناتی کے دوران اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے سٹور میں وافر مقدار میں موجود ادویات بھاری مقدار میں خریدنے ،ادویات کی خریداری، استعمال اور ترسیل میں مس مینجمنٹ ،انکی مبینہ غفلت کے باعث کروڑوں روپے کی ادویات کے ایکسپائر ہونے ،اپنی ذمہ داریاں احسن طریقے سے نہ نبھانے،پنجاب ہیلتھ کئیر کمیشن کے مقررہ ایس او پیز پر عمل نہ کرنے ،ادویات کے فرسٹ ایکسپائر فرسٹ آوٹ رول (fefo)پر عمل نہ کرنے اوراس مد میں حکومتی خزانے کو بھاری نقصان پہنچانے کے الزامات پرگورنمنٹ آف پنجاب پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ کےسپیشل سیکریٹری مدثر وحید ملک نے وزیر اعلی کے حکم پر انکوائری کا حکم جاری کرتے ہوئے فاروق حمید شیخ ممبر انکوائریز ii ایس اینڈ جی اے ڈی کو انکوائری آفیسر مقرر کردیا اور چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھارٹی وہاڑی کو محکمہ کا نمائندہ مقرر کر دیا آرڈر میں مندرجہ بالا الزام علیہان 7 یوم کے اندراپنے دفاع تحریری ثبوت فراہم کرنے کا پابند کیا گیا ہے بصورت دیگر الزامات کو درست مانا جائے گا ۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -