3سال سے ایک ہی سٹیشن پر تعیناتی،پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کاگریڈ17سے 22کے سرکاری افسران کے تبادلوں کا حکم

3سال سے ایک ہی سٹیشن پر تعیناتی،پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کاگریڈ17سے 22کے سرکاری ...

  

اسلام آباد(آئی این پی)پارلیمنٹ کی ذیلی پبلک اکا ونٹس کمیٹی نے تین سال سے زیادہ کسی بھی محکمے کے ایک ہی اسٹیشن پر تعینات گریڈ 17سے 22 کے تمام سرکاری افسران کے تبادلوں کا حکم دے دیا،کمیٹی اجلاس کے دوران بجلی خراب ہو گئی جس کی وجہ سے کمیٹی روم میں ایمرجنسی لائیٹس لا کر رکھ دی گئیں،تقریبا آدھے گھنٹے تک بجلی بحال نہ ہونے پر اجلاس کی کاروائی ملتوی کردی گئی جبکہ کمیٹی نے بجلی کی بندش کے معاملے پر سی ڈی اے کو انکوائری کرانے کا حکم دیتے ہوئے رپورٹ طلب لی۔منگل کو پارلیمنٹ کی پبلک اکاونٹس کمیٹی کی ذیلی کمیٹی کا اجلاس کنوینئر نور عالم خان کی صدارت میں ہوا،جس میں وزارت مواصلات کے مالی سال 2017-18 کے آڈٹ پیراز کا جائزہ لیا گیا،اجلاس کے دوران کنوینئر کمیٹی نور عالم خان نے سرکاری افسران کے تبادلوں کا معاملہ اٹھاتے ہوئے کہا کہ جو بھی سرکاری افسر تین سال سے زیادہ اپنے محکمے کے کسی اسٹیشن میں تعینات ہو اس کا ٹرانسفر محکمے کے دوسرے اسٹیشن میں کیا جائے،تین سال سے زیادہ کسی افسر کو ایک اسٹیشن پر نہیں رہنا چاہیئے،قانون یہ کہتا ہے,اس موقع پر این ایچ اے حکام نے تبادلوں والے افسران کی فہرست بھی کمیٹی کے سامنے پیش کی،اجلاس کے دوران بجلی خراب ہو گئی جس کی وجہ سے اجلاس کی کاروائی روکنی پڑی جبکہ کمیٹی روم میں ایمرجنسی لائیٹس لا کر رکھ دی گئیں،تقریبا آدھے گھنٹے تک بجلی بحال نہ ہوئی جس پر کنوینئر کمیٹی نے شدید تشویش کا اظہار کیا اور آئیسکو حکام کو فون کرنے کی ہدایت کی تاہم بجلی بحال نہ ہو نے پر اجلاس کی کاروائی ملتوی کرنی پڑی،جبکہ کنوینئر کمیٹی نے بجلی کی بندش کے باعث اجلاس ملتوی ہونے کی وجہ سے ہونے والے نقصان کا آڈٹ پیرا بنانے کی بھی ہدایت کی،کمیٹی نے بجلی کی بندش کے معاملے پر سی ڈی اے کو انکوائری کرانے کا حکم دیتے ہوئے رپورٹ طلب لی۔

 تبادلوں 

مزید :

صفحہ آخر -