مانیٹری پالیسی میں ایک فیصد اضافہ ملکی معیشت پر خودکش حملہ، مفتاح اسماعیل

  مانیٹری پالیسی میں ایک فیصد اضافہ ملکی معیشت پر خودکش حملہ، مفتاح اسماعیل

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے سٹیٹ بنک کی مانیٹری پالیسی پر بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ مرکزی بنک کی پالیسی نہیں عمران خان حکومت کے خلاف چارج شیٹ ہے،پالیسی ریٹ میں مزید ایک فیصد اضافہ کر کے ملکی معیشت پر خودکش حملہ کیا گیا ہے۔ ایک بیان میں مفتاح اسماعیل نے کہا کہ ملک میں مانیٹری پالیسی نام کی کوئی چیز باقی نہیں رہی، اب صرف آئی ایم ایف کی ہدایات پر عمل ہورہا ہے، اسٹیٹ بنک اور معاشی پالیسی آئی ایم ایف کے کنٹرول میں ہے۔انہوں نے کہا کہ مہنگائی میں اضافہ حکومت کی کی ناکامیوں کا منہ بولتا ثبوت ہے، موجودہ پالیسی ریٹ پر صنعت و کاروبار تو دور ریڑھی بھی نہیں لگائی جاسکتی۔حکومت کی بس ایک ہی پالیسی ہے کہ اس کی کوئی پالیسی نہیں۔سابق وزیر خزانہ نے کہا کہ حکومتی نالائقی ڈالر میں اضافہ، پالیسی ریٹ میں اضافہ، مہنگائی میں اضافہ، افراط زر میں اضافہ، بیروزگاری میں اضافہ، قرضوں میں اضافہ کی صورت ظاہر ہے۔مفتاح اسماعیل نے کہا کہ عوام کی چیخوں میں اضافہ، آٹے اور روٹی کی قیمت میں اضافہ، بجلی اور گیس کی قیمتوں میں اضافہ حکومتی بے حسی کی علامات ہیں۔ حکومت جھوٹ پر زندہ ہے، حالات یہی رہے تو ملک نہیں چل سکتا۔

مفتاح اسماعیل

مزید :

صفحہ اول -