کوہاٹ ،تاجر اتحاد کا ظالمانہ ٹیکسوں کیخلاف احتجاجی جلسہ کا انعقاد

کوہاٹ ،تاجر اتحاد کا ظالمانہ ٹیکسوں کیخلاف احتجاجی جلسہ کا انعقاد

  

کوھاٹ (بیورو رپورٹ) آئی ایم ایف بجٹ اور ظالمانہ ٹیکسوں کے خلاف کوھاٹ تاجر اتحاد کا بازار زرگراں چوک میں احتجاجی جلسہ‘ بجٹ مسترد‘ تحصیل کونسلر جاوید نور سمیت مختلف سیاسی جماعتوں کے نمائندوں کی بھرپور شرکت‘ حکومت سے پروفیشنل کالنگ ٹریڈ ٹیکس واپس لینے تک احتجاج جاری رکھنے کا اعلان‘ احتجاجی جلسہ کی صدارت چیئرمین امیر خان آفریدی نے کی احتجاجی جلسہ سے صدر حفیظ الدین‘ امیر خان آفریدی‘ سلیم خان‘ محمد سعید اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے تحریک انصاف حکومت کے آئی ایم ایف بجٹ کو بری طرح مسترد کیا اور اسے عوام دشمن بجٹ قرار دیا مقررین کا کہنا تھا کہ عوام نے تحریک انصاف کو بھاری اکثریت سے ووٹ دے کر کامیاب کروایا تاکہ ان کے منشور اور انتخابی وعدوں کے مطابق عوام کو انصاف اور ریلیف مل سکے مگر اس ظالم جماعت نے پاکستانی عوام کو آئی ایم ایف کے ہاتھوں فروخت کر دیا اور ملک کو ورلڈ بینک کے ساتھ گروی رکھ لیا عوام کو ریلیف دینے کے بجائے انہیں ٹیکسوں کے بوجھ تلے دبا دیا صحت‘ تعلیم‘ صفائی‘ پانی فراہمی بجلی فراہمی اور دیگر مدات میں کوئی سہولت نہیں دی گئی انہوں نے کہا کہ قوموں کی ٹیکس رقوم سے ترقی ہوتی ہے اور معیشت مستحکم ہوتی ہے مگر پاکستان میں ٹیکس کو غنڈہ گردی کے طور پر لینے کی پالیسی نافذ کی گئی اور سہولیات فراہمی پر خاموشی اختیار کی گئی جو موجودہ حکومت کے لےے باعث شرم ہے انہوں نے کہا کہ اگر حکومت نے ٹیکسز کو واپس نہ لیا تو احتجاجی تحریک چلا کر اس حکومت کا دھڑن تختہ کریں گے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -