لنڈی کوتل،بند مسجد کھولانے کیلئے ڈی سی کو کمیٹی تشکیل دینے کا حکم

لنڈی کوتل،بند مسجد کھولانے کیلئے ڈی سی کو کمیٹی تشکیل دینے کا حکم

  

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاور ہائیکورٹ نے لنڈی کوتل میں بند مسجد کو کھولنے کیلئے درئردرخواست پر ڈی سی کو مسجد کھولنے کے لئے مقامی افراد پر کمیٹی تشکیل دینے کا حکم دیتے ہوئے کیس کو نمٹا دیا درخواست گزار کی طرف سے لطیف آفریدی ایڈوکیٹ اور طارق افغان ایڈوکیٹ پیش ہوئے کیس کی سماعت پشاور ہائیکورٹ کے جسٹس اکرام اللہ خان اور جسٹس اعجاز انور نے کی درخواست گزار عبدالطیف افریدی نے عدالت کو بتایا کہ 2010 سے مسجد بند ہے، مسجد کو نمازیوں کے لئے کھولا جائے امام مسجد نے 2006 میں مسجد پر قبضہ کیا تھااوربعدازاں کالعدم مذہبی تنظیم میں شامل ہوگیا تھا اور مسجد کو ریاست مخالف سرگرمیوں کیلئے استعمال کرتا تھا وہ تھیالوجی کا ٹیچر تھا2009 تک سرکار سے تنخواہ بھی لیتارہا ہے ا اس موقع پر جسٹس اکرام اللہ نے کہا کہ گاؤں کے عمائدین پر مشتمل کمیٹی بنائی جائے وہ فیصلہ کریں تو یہ اچھا ہوگا گاؤں کے عمائدین مشتمل کمیٹی مسجد کھولنے کا فیصلہ کریں اور اس بات کو یقینی بنائیں کہ دوبارہ انٹی سٹیٹ سرگرمیوں کے لئے مسجد استعمال نہ ہو فاضل بینچ نے ڈی سی کو گاؤں کے بزرگ افراد پر مشتمل کمیٹی بنانے کا حکم دیتے ہوئے کیس نمٹا دیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -