چکی آٹا مزید 5روپے مہنگا، انتظامیہ سرکاری نرخنا موں پر عملدرآمد کرانے میں ناکام

چکی آٹا مزید 5روپے مہنگا، انتظامیہ سرکاری نرخنا موں پر عملدرآمد کرانے میں ...

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)شہر میں اشیا ء خوردونو ش کی قیمتو ں میں روزبروز اضا فہ معمو ل بن گیا ہے ایک طرف آ ٹا ملنا نا پید ہے تو دوسری جانب آ ٹا کی قیمتو ں میں روزا نہ کی بنیا د پر من ما نا اضا فہ دیکھنے میں آرہا ہے۔چکی مالکان نے ازخود قیمتیں بڑھاتے ہوئے آٹا مزید تین سے پانچ روپے مہنگا کر دیا، ایسوسی ایشن کا کہنا ہے مہنگی گندم کے باعث چکی مالکان کو 65 روپے میں آٹا فروخت کرنے پر مجبور نہیں کر سکتے۔ شہر میں آٹے کی قلت کا بحران جاری ہے۔ پنجاب کی غلہ منڈیوں میں گندم کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا گیا۔واضح رہے کہ چکی آٹے کی قیمت بڑھنے پر ایسوسی ایشن نے مراسلہ جاری نہیں کیا۔چکی مالکان کے مطابق غلہ منڈیوں میں گندم 2100 روپے فی من تک پہنچ گئی اس لئے آ ٹا 65 روپے فی کلو میں فر و خت کرنا ممکن نہیں رہا۔اسی طرح گھی، چینی، دالو ں، سبزیوں اور پھلوں کی قیمتیں بھی آسما نو ں سے با تیں کرتی نظر آرہی ہیں۔ سر کا ر ی نرخوں میں 4سبزیوں اور 6پھلوں کی قیمتوں میں اضافہ ہو گیا۔ انتظامیہ سرکاری ریٹ لسٹ پر عمل درآمد کروانے میں ناکام ہو گئی۔ دکاندار پھل اور سبزیاں من مانی قیمتوں پر فروخت کررہے ہیں، پیاز 60، ٹماٹر 120، لہسن 282، ادرک 460 روپے فی کلو تک فروخت ہونے لگا۔ سبز مرچ 140، لیموں 120، آلو 90، بینگن 80 دیسی ٹینڈے 130، بھنڈی 150، مٹر 250، اروی 140 اور گاجر 100 روپے، آڑو 275، الیچی 350، گرما 80، انار 600 اور تربوز 40 روپے فی کلو میں فروخت ہورہا ہے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -