کورونا وائرس کے بارے میں غلط معلومات پھیلانے والوں کیخلاف کارروائی کیلئے کمیٹی قائم

  کورونا وائرس کے بارے میں غلط معلومات پھیلانے والوں کیخلاف کارروائی کیلئے ...

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیر داخلہ بریگیڈئیر ریٹائرڈ اعجاز احمد شاہ کے زیر صدارت اجلاس میں کورونا وائرس سے متعلق غلط انفارمیشن کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے۔کمیٹی میں کل 9 ارکان شامل ہیں جس کی صدارت وزیر داخلہ اعجاز احمد شاہ کریں گے۔ دیگر اراکین میں ڈاکٹر فیصل سلطان، وزارت داخلہ، وزارت صحت، آئی ایس پی آر، ایف آئی اے، پی ٹی اے، پیمرا اور این سی او سی کا نمائندہ کمیٹی کا حصہ ہوگا۔ کمیٹی لائحہ عمل کے مطابق غلط انفارمیشن کے پھیلاؤ کو روکنے میں اپنا کردار ادا کرے گی۔اس سلسلے میں کمیٹی کا پہلا اجلاس وزارت داخلہ میں منعقد ہوا جس سے خطاب کرتے ہوئے وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ غلط اور غیر تصدیق شدہ معلومات پھیلانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔انہوں نے کمیٹی کے شرکا کو ہدایت کی وہ اس فعل کو روکنے کے لیے ہر ممکن کارروائی کریں۔ اعجاز شاہ نے ڈائریکٹر سائبر کرائم ونگ ایف آئی اے کو باقاعدہ ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ مانیٹرنگ اور ایکشن کو بروقت بنائیں اور ذمہ داروں کے خلاف فوری کارروائی کریں۔ ان کا کہنا تھا کہ اس طرح کی فیک نیوز اور غلط انفارمیشن پھیلانے والے ملک اور عوام دوست نہیں ہیں۔اعجاز شاہ نے مزید کہا کہ کمیٹی کی تشکیل کا مقصد عوام تک صحیح معلومات کی رسائی کو یقینی بنانا ہے۔ غلط اور غیر تصدیق شدہ خبروں کا پھیلاؤ نقصان دہ ثابت ہو سکتا ہے۔ ہم تمام ممکن وسائل بروئے کار لاتے ہوئے ذمہ داروں کا پتا لگائیں گے۔میڈیا کے کردار پر بات کرتے ہوئے وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ وہ اس سلسلے میں اہم کردار ادا کر سکتا ہے۔ الیکٹرانک میڈیا پر اس نوعیت کی خبروں کو مانیٹر کرتے ہوئے ان کے پھیلاؤ کو روکا جائے۔ ڈی جی پیمرا اس معاملے پر خصوصی توجہ دیں۔وزیر داخلہ نے اس بات پر زور دیا کہ اس مشکل وقت میں تمام ادارے اور میڈیا اپنا کردار ادا کریں۔

کمیٹی قائم

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) وفاقی وزیرداخلہ بریگیڈیئر(ر)سیداعجازشاہ نے کہاہے کہ علماء کرام عیدالاضحی کے موقع پر کروناایس اوپیزپرعمل درآمدکروانے میں اپناکرداراداکریں، منبرومحراب ملک میں یکجہتی اوراتحادکی فضاء پیداکرنے میں میں اہم کرداراداکرسکتاہے جبکہ چیئر مین مجلس علماء پاکستان خطیب بادشاہی مسجد لاہور مولانا سید عبد الخبیرآزادنے کہاہے کہ پیغام پاکستان '' ایک عظیم بیانیہ ہے جس کو عام کرنے اور قانونی شکل دینے کی ضرورت ہے ' ملک جن حالات سے گذر رہا ہے' اس میں اتحاد اور رواداری کی اشد ضرورت ہے کہ ہم اپنی صفوں میں اتحاد بین المسلمین کے پیغام کو عام کریں۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیرداخلہ سیداعجازشاہ سے،چیئر مین مجلس علماء پاکستان خطیب بادشاہی مسجد لاہور مولانا سید عبد الخبیرآزادنے ملاقات کی۔اس موقع پروفاقی وزیرداخلہ سیداعجازشاہ نے کہاکہ حکومت کی بہترحکمت عملی سے کروناوائرس کے اثرات میں کمی آرہی ہے عیدالاضحی کے موقع پر تمام افراد حفاظتی اقدامات پر عملدرآمد کو یقینی بنا نے کی ضرورت ہے، انتظامیہ بھی ایس او پیز پر عمل درآمد ہر صورت ممکن بنائے، لاپرواہی ہمارے لئے آئندہ دنوں میں مشکل صورتحال پیدا کر سکتی ہے، ہمیں بحیثیت قوم اس وبا کا مقابلہ کرنا ہے، حکومتی سطح پر ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں کہ عوام کا تحفظ یقینی بنائیں۔ چیئر مین مجلس علماء پاکستان خطیب بادشاہی مسجد لاہور مولانا سید عبد الخبیرآزادنے اس موقع پر ملک پاکستان میں مذہبی ہم آہنگی اور رواداری کے سلسلہ میں ہونے والی''پیغام امن کانفرنس'' کے بارے میں ان کو بتایا'اوریہ کہا کہ ''پیغام پاکستان '' ایک عظیم بیانیہ ہے جس کو ضرورت ہے عام کرنے کی اور قانونی شکل دینے کی ' مولانا آزاد نے کہا کہ ملک جن حالات سے گذر رہا ہے' اس میں اتحاد اور رواداری کی اشد ضرورت ہے کہ ہم اپنی صفوں میں اتحاد بین المسلمین کے پیغام کو عام کریں ہم ملک دشمن عناصرکی سازشوں کوکامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

اعجازشاہ

مزید :

صفحہ اول -