شادی کی تقاریب میں ڈانس کرنے والے لڑکے کو زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا

شادی کی تقاریب میں ڈانس کرنے والے لڑکے کو زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا
شادی کی تقاریب میں ڈانس کرنے والے لڑکے کو زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا

  

خیرپور (ویب ڈیسک) خیرپور میں استاد نے ٹیوشن کے 2 طالب علموں اور سرگودھا میں 3 افراد نے شادی کی تقاریب میں ڈانس کرنے والے لڑکے کو زیادتی کا نشانہ بناڈالا۔

سینیئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (ایس ایس پی) امیر سعود مگسی کے مطابق خیر پور کے علاقے ٹھری میر واہ میں استاد سارنگ شر نے 2 طالب علموں سے زیادتی کی، جس کی ویڈیو بھی وائرل ہوگئی ہے۔

12 اور 14 سال کی عمر کے طالب علموں کے مطابق وہ ملزم سارنگ کے گھر ٹیوشن پڑھنےجاتے تھے اور وہیں ان کے استاد نے ہی انہیں جنسی زیادتی کا نشانہ بنایا۔پولیس نے بچوں کے والد کی مدعیت میں 2 الگ الگ مقدمات درج کرلیے ہیں جب کہ واقعے کے بعد سے ملزم گھر سے فرار ہے۔

دوسری جانب سرگودھا میں بھی شادی کی تقاریب میں ڈانس کرنے والے لڑکے کو 3 افراد نے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔سرگودھا میں محبوب کالونی کے رہائشی متاثرہ لڑکے نے پولیس کو بیان دیا ہے کہ 3 افراد اسے شادی کی تقریب میں ڈانس کرنے کا جھانسہ دے کر اپنے ساتھ لے گئے اور ڈیرے پر لے جاکر زیادتی کا نشانہ بنایا۔پولیس کا کہنا ہے کہ میڈیکل رپورٹ میں لڑکے سے زیادتی ثابت ہوگئی ہے، ایک ملزم کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کرلیا گیاہے جب کہ بقیہ ملزمان کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارے جارہے ہیں۔

مزید :

علاقائی -سندھ -خیرپور -