بونیر ،شدید بارش اور طوفان سے بجلی کا نظام درہم برہم

بونیر ،شدید بارش اور طوفان سے بجلی کا نظام درہم برہم

بونیر (ڈسٹرکٹ رپورٹر)شدید بارش اور طوفان کے بعد پورے بونیر میں 20 گھنٹے عائب ہونے ولا بجلی بحال ہوگیا ،عوام نے سکھ کاسانس لیا ،واپڈا اہلکاروں کی نااہلی اور کام چوری کی وجہ سے روزہ داروں نے افطاری اور سحری اندھرے میں کی جبکہ واپڈااہلکاروں کو خوب بددعائیں دے ۔منگل کے روز ہونے والے بارش او ر شدید طو فان کی وجہ سے پورے ضلع میں نصب بڑے بڑے سائن بورڈ اکھڑ گئے جبکہ قریبی دکانوں کو بھی نقصان پہنچا ،تاہم پورے ضلع میں کسی قسم کی جانیں نقصان کی اطلاع نہیں ملی ۔تفصیلات کے مطابق بونیر میں شدید گرمی کا زور اس وقت ٹوٹا جب تین بجے کے قریب شدید بارش اور ساتھ ساتھ طو فان شروع ہو اجس کی وجہ سے پورے ضلع میں بجلی سسٹم فیل ہوگیا ،جس کی وجہ سے بونیر کے تمام مساجد میں وضو کے لئے پانی نایاب ہوگیا ۔۔بجلی سسٹم فیل ہونے کے بعد واپڈا اہلکاروں نے اپنے موبائل نمبر ز بند کردئے اور فالٹ کا بہانہ بناکر لمبی تان کر سوگئے ۔بجلی کی صورت حال جاننے کے لئے جب گرڈ سے رابطہ کیا جاتا تو گرڈ کا نمبر 0939555300مسلسل مصروف اتا ہے ۔ادھر پیربابا فیڈر پر شدید لوڈ شیڈنگ اور انتہائی کم وولٹیج کی وجہ سے جماعت اسلامی کے سابق ضلع امیر محمد خنیف ،محمد حلیم باچا ،مختیار خان کی سربراہی میں ایک وفد نے ڈی سی بونیر سے ملاقات کی اور علاقہ میں ہونے والے بجلی کی صورت حال سے انہیں اگاہ کیا ،وفد نے ڈی سی بونیر کو بتایا کہ عوام بجلی کی انتہائی کم وولٹیج کے خلاف احتجاج کرنے سڑکوں پر نکلنے کو تیار ہیں اور اس صورت میں عوام کو کنٹرول کرنا کسی کی بس کی بات نہیں ہوگی ،واضح رہے کہ بونیر میں گذشتہ دو روز سے بجلی کی صورت حال انتہائی خراب ہے اور ہر فیڈر پر کئی گھنٹے لوڈ شیڈنگ ہو رہی ہیں ۔

مزید : کراچی صفحہ اول