خراب فیلڈنگ نے آسٹریلوی بلے باز عثمان خواجہ کا کیرئیر داو پر لگا دیا

خراب فیلڈنگ نے آسٹریلوی بلے باز عثمان خواجہ کا کیرئیر داو پر لگا دیا
خراب فیلڈنگ نے آسٹریلوی بلے باز عثمان خواجہ کا کیرئیر داو پر لگا دیا

  


بارباڈوس(ویب ڈیسک)خراب فیلڈنگ نے آسٹریلوی بلے باز عثمان خواجہ کا کرکٹ کیریئر داو پر لگا دیا ہے۔ منجھے ہوئے افتتاحی بلے باز نے ویسٹ انڈیز کیخلاف میچ میں دو اہم مواقع پر آسان کیچز ڈراپ کئے جس کی وجہ سے آسٹریلیا کو میچ میں شکست ہوئی۔انہوں نے میچ کے دوسرے اوور میںمڈ آن پر اوپنر فلیچر کا کیچ چھوڑا۔ اس کے بعد آٹھویں اوور میں انہوں نے لانگ آن پر دوسرے اوپنر جانسن چارلس کا کیچ چھوڑ دیا جس سے ویسٹ انڈیز کی ٹیم کیلئے جیت آسان ہوگئی۔چارلس نے بعد میں جارحانہ 48اور فلیچر نے 27رنز بنائے۔ ان دونوں کے درمیان پہلی وکٹ کیلئے 74رنز کی پارٹنر شپ ہوئی ۔اگر عثمان خواجہ پہلے اوور میں ہی کیچ پکڑ لیتے تو صفر پر پہلی وکٹ گر چکی ہوتی اور میچ کا نقشہ بھی بدل جاتا۔میچ کے بعد گفتگو کرتے ہوئے عثمان خواجہ نے کہا کہ مجھے افسوس ہے کہ میں اس میچ کو یادگار نہ بنا سکا۔ پہلے تو میں اپنی سنچری دو رنز کی کمی سے مکمل نہ کر سکا اس کے بعد اہم مواقع پر کیچ چھوڑے جو ٹیم کیلئے بھاری ثابت ہوئے۔ کرکٹ آسٹریلیا کے ذرائع کا کہنا ہے کہ اوپنر کو فیلڈنگ میں بہتری لانے کا کہہ دیا گیا ہے ۔ فیلڈنگ آسٹریلوی ٹیم کا سب سے بڑا ہتھیار ہے اگر انہوں نے فیلڈنگ کا معیار بہتر نہ کیا تو ان کے متبادل پر غور کیا جاسکتا ہے۔ واضح رہے کہ عثمان خواجہ نے اس میچ میں 98رنز بنائے تھے۔

مزید : کھیل