’اس جگہ سے غیر ملکیوں کو باہر نکالو‘ سعودی شہریوں نے شور مچادیا، ہنگامہ برپاکردیا

’اس جگہ سے غیر ملکیوں کو باہر نکالو‘ سعودی شہریوں نے شور مچادیا، ہنگامہ ...
’اس جگہ سے غیر ملکیوں کو باہر نکالو‘ سعودی شہریوں نے شور مچادیا، ہنگامہ برپاکردیا

  


ریاض (مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومت کے اس اعلان کے باوجود کہ ٹیلی کام کے شعبے سے تمام غیر ملکیوں کو نکا ل دیا جائے گا اور موبائل فون کی دکانوں پر بھی صرف سعودی شہری ملازمت کریں گے ، جدہ کے بازاروں میں موبائل فون کی دکانوں پر کام کرنے والے غیر ملکیوں کی کثرت ہے، جس پر سعودی شہریوں نے ہنگامہ برپا کر دیا ہے اور ان غیر ملکیوں کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی ہے۔

نائب ولی عہد و وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلمان کی سی آئی اے کے عہدیداروں اور کانگرس ممبران سے ملاقاتیں

عرب نیوز کی رپورٹ کے مطابق جدہ کی فلسطین سٹریٹ میں خریداری کیلئے جانے والے سعودی شہریوں کا کہنا ہے کہ یہاں موبائل فون کی دکانیں غیر ملکی ملازمین سے بھری پڑی ہیں اور ایسا بالکل نظر نہیں آتا کہ حکومت ان دکانوں سے غیر ملکیوں کو نکال کر سعودی شہریوں کو ملازمت دینے کا اعلان کر چکی ہے۔ ایک شہری احمد عبدالمجید کا کہنا تھا کہ انہوں نے جب پچھلی بار اس علاقے کا چکر لگایا تو یہ دیکھ کر حیران رہ گئے کہ غیر ملکی ملازمین چھائے ہوئے تھے جبکہ شہری کہیں دیکھنے کو بھی نہیں ملتے تھے۔ اسی طرح ایک او ر شہری سمی الغامدی نے بتایا کہ جدہ کی فلسطین سٹریٹ میں موبائل فون کی دکانوں پر غیر ملکیوں کا غلبہ ہے جبکہ حکومت اس صورتحال پر خاموش ہے۔ یہ اطلاعات بھی سامنے آئی ہے حکومتی اہلکار صرف بڑی کمپنیوں پر توجہ دے رہے ہیں جبکہ چھوٹی دکانوں پر تاحال غی ملکی پہلے کی طرح ہی کام کر رہے ہیں۔

میڈیا میں یہ خبریں سامنے آنے کے بعد حکام کی توجہ بھی اس جانب مبذول ہو گئی ہے۔ وزارتِ محنت کے میڈیا سے سنٹر کے ڈائریکٹر احمد الغامدی نے واضح کیا کہ تمام ریجن میں چھاپے مارے جائیں گے اور اس بات کو یقینی بنایا جائے گا کہ کوئی بھی غیر ملکی ممنوعہ کاروبار سے منسلک نہ ہو ان کا کہنا تھا کہ ٹیلی کمیونیکیشن کے سیکٹر میں سعودی شہریوں کی ملازمت کو یقینی بنانے کیلئے 144 انسپکٹر سرگرم ہیں اور اس عزم کا ارادہ کیا کہ متعلقہ حکام نگرانی اور چھاپو ں میں مزید تیزی لائیں گے ۔

مزید : عرب دنیا