قیدی کی ذہنی حالت مشکوک انسانی حقوق کی تنظیم کا سزائے موت روکنے کامطالبہ

قیدی کی ذہنی حالت مشکوک انسانی حقوق کی تنظیم کا سزائے موت روکنے کامطالبہ

اسلام آباد(آ ن لائن) انسانی حقوق کی قانونی تنظیم جسٹس پروجیکٹ پاکستان نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ 36 سالہ غلام عباس جسے 18 تاریخ کو پھانسی دے دی جائے گی،سزائے موت رکوائے،تنظیم کے مطابق غلام عباس میں ذہنی امراض کی علاماتیں واضح ہیں،اسے ذہنی معذور کے بحالی مراکز میں منتقل کیا جا ئے۔ واضح رہے کہ سپریم کورٹ کی جانب مقرر ماہرنفسیات ڈاکٹر ملک حسین نے کہا تھا کہ ’طبی ریکارڈ کے مطابق جیل حکام نے غلام عباس کو ذہنی امراض کی سخت ادویات دیں ہیں وہ13 برس سے جیل کاٹ رہا ہے۔ سزا موت کے خلاف صدر مملکت کو معافی کی تازہ درخواست ارسال کی جا چکی ہے۔

ذہنی حالت

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر