پاکستانی کھلاڑیوں کی شیشہ کیفے میں بیٹھی ویڈیو، برطانوی ماہر قانون بھی میدان میں آگئے،ایسی رائے پیش کردی کہ شعیب ملک کے ساتھ ساتھ ثانیہ مرزا بھی خوفزدہ ہو جائیں

پاکستانی کھلاڑیوں کی شیشہ کیفے میں بیٹھی ویڈیو، برطانوی ماہر قانون بھی ...
پاکستانی کھلاڑیوں کی شیشہ کیفے میں بیٹھی ویڈیو، برطانوی ماہر قانون بھی میدان میں آگئے،ایسی رائے پیش کردی کہ شعیب ملک کے ساتھ ساتھ ثانیہ مرزا بھی خوفزدہ ہو جائیں

  


مانچسٹر(ڈیلی پاکستان آن لائن )برطانوی ماہر قانون نے کہا ہے کہ بچوں کو شیشہ کیفے میں لے جانا جرم ہے، ایسے والدین کو سزا بھی ہو سکتی ہے۔قانونی ماہرین کے مطابق شیشہ کیفے عوامی مقام ہے،نجی جگہ نہیں اس لئے وہاں ویڈیو بنانا بھی غیر قانونی عمل نہیں۔

پاکستانی ٹیم کے سینئر کھلاڑی شعیب ملک کی اہلیہ ثانیہ مرزانے ویڈیو بنانے والے پر سخت تنقید کی تھی ۔انہوں نے کہا تھا کہ ان کی اجازت اور پرائیوسی کی پرواکیے بغیر ویڈیو بنائی گئی جبکہ ان کا بچہ بھی ساتھ تھا،وہ ڈنر کےلئے باہر گئے تھے۔ثانیہ مرزا کا بیان سامنے آنے کے بعد برطانوی قانون کے ماہرین نے کہا کہ 17 سال سے کم عمر بچوں کو شیشہ کیفے میں لے جانا جرم ہے، ایسے والدین کو سزا بھی ہو سکتی ہے، شیشہ کیفے عوامی مقام ہے وڈیو بنانا بھی غیرقانونی عمل نہیں۔

دوسری طرف پاکستانی ٹیم کے کھلاڑیوں کی مانچسٹر میں پیشہ پینے کی ویڈیو پر پی سی بی نے تمام کھلاڑیوں کو کلین چٹ دے دی ہے۔پی سی بی کے مطابق میچ کی رات کسی کھلاڑی نےکرفیو ٹائم کی خلاف ورزی نہیں کی،کھلاڑی اپنے اہلخانہ کےساتھ میچ سے 2روز قبل مینجمنٹ سے اجازت لےکرباہر گئے تھے،میچ کی رات تمام کھلاڑی ٹائم کے مطابق اپنے ہوٹل میں موجود تھے۔

مزید : کھیل