سابق وزیر اعظم نے حکومتی جماعت میں انتشار سے متعلق تہلکہ خیزدعویٰ کردیا

سابق وزیر اعظم نے حکومتی جماعت میں انتشار سے متعلق تہلکہ خیزدعویٰ کردیا
سابق وزیر اعظم نے حکومتی جماعت میں انتشار سے متعلق تہلکہ خیزدعویٰ کردیا

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی نے کہاہے کہ حکومت کے لوگ بھی ان سے ناراض ہیں ، ان کی جانب سے ہم سے رابطہ کیا گیاہے ، نیب کوختم کرنا چاہئے ، کرپشن پکڑنی ہے تو ایف آئی اے کے قوانین موجود ہیں۔

جیونیوز کے پروگرام ”کیپٹل ٹاک“میں گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہا کہ یہ حکومت اپنی اصلاح نہیں کرسکی ، وزیر اعظم نے وزراءسے کہاہے کہ اسمبلی میں اپوزیشن کو بولنے نہ دیں ۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ حکومت کے لوگ بھی ان سے ناراض ہیں ، ان کی جانب سے ہم سے رابطہ کیا گیاہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم بھی انسان ہیں ، ہم سے بھی غلطیاں ہوئی ہیں، چیئر مین نیب کیلئے جسٹس (ر) جاوید اقبال کا نام خورشیدشاہ نے دیا تھا ۔

انہوں نے کہا کہ نیب کوختم کرنا چاہئے ، کرپشن پکڑنی ہے تو ایف آئی اے کے قوانین موجود ہیں، اگر ہم نے ایک غلطی کی ہے تو موجودہ حکومت سو غلطیاں کررہی ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ ہماری حکومت نے فیصلہ کیاکہ جسٹس ثاقب نثار کے خلاف ریفرنس دائر نہ کیا جائے اور جسٹس ثاقب نثار کے خلاف ریفرنس دائر نہ کرنے کا فیصلہ بہتر تھا ۔

مزید : قومی