حکومت کا سٹیل ملز کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کو بھی تحلیل کرنے کا فیصلہ

حکومت کا سٹیل ملز کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کو بھی تحلیل کرنے کا فیصلہ

  

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)پاکستان سٹیل ملز کے ہزاروں ملازمین کو فارغ کرنے کے فیصلے کے بعد وفاقی حکومت نے سٹیل ملز کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کو بھی تحلیل کرنے کا فیصلہ کیا ہے،ذرائع کے مطابق مشیر تجارت عبد الرزاق داؤد کے تعینات کردہ بورڈ آف ڈائریکٹر کے چیئرمین عامر ممتاز سمیت دیگر اراکین کی مدت پوری ہو چکی ہے اب ملز کو چلانے کے حوالے سے حکومت کی کوئی واضح پالیسی نہیں اور بورڈ کو برطرف کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے،پاکستان سٹیل ملز سٹیٹ ہولڈرز گروپ کے کنوینئر ممریز خان کا کہنا ہے کہ ،ساڑھے 6 ہزار ملازمین اور1400 ڈیلرز،سپلائرز اور ٹھیکیداروں کے85 ارب روپے سٹیل مل میں پھنسے ہوئے ہیں،یہ حکومت کب ادا کرے گی اس کے بارے میں کچھ نہیں بتایا گیا جبکہ سٹیل ملز کی نجکاری یا اسے پبلک پرائیویٹ کارپوریشن کے تحت چلانے سے متعلق بھی پالیسی نظر نہیں آتی،ذرائع کا کہنا ہے کہ اظہار دلچسپی طلب کئے بغیر ایک چینی کمپنی کا انتخاب کیسے کر دیا گیا یہ بھی نہیں بتایا گیا۔دوسری طرف سٹیل ملز کی اگر نجکاری کی جاتی ہے یا اسے پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے تحت چلانے کی کوشش کی جاتی ہے یہ اس وقت تک ممکن نہیں ہو گا جب تک 2006 سے 2020 تک سٹیل ملز کو ہونے والے 11 ہزار ارب سے زائد کے نقصان کی وجوہات کی تحقیقات نہیں کی جاتیں۔

ممریز خان

مزید :

صفحہ آخر -