پاکستان کے پہلے بجٹ میں خواتین کو نظر انداز کیا گیا،بیلم حسنین

پاکستان کے پہلے بجٹ میں خواتین کو نظر انداز کیا گیا،بیلم حسنین

  

لاہور(لیڈی  رپورٹر) پیپلزپارٹی کی سابق رکن قومی اسمبلی بیگم بیلم حسنین نے کہا ہے کہ پاکستان کا پہلا بجٹ  ہے جس میں خواتین کیلئے کوئی فنڈ نہیں رکھا گیا جبکہ پی ٹی آئی میں خواتین کی تعداد بھی زیادہ ہے اور عورتوں کی ترقی کا سب سے زیادہ شور بھی وزیراعظم عمران خان نے مچایا تھا وہ اپنے اسلام آباد کے  دھرنے میں بار بار خواتین کی ترقی کیلئے نوکریوں کے کوٹہ کی بات کرتے تھے مگر اس بجٹ میں ویمن ڈویلپمنٹ کو نہ ہونے کے برابر نوازا گیا۔  ایک بیان میں بیگم بیلم حسنین نے کہا کہ پیپلزپارٹی  کی تمام حکومتوں میں عورتوں کی ترقی پر کامیاب ہوا اور خواتین کے ادارے الگ قائم کیے گئے اور بجٹ میں ہمیشہ خواتین کی ترقی کیلئے بڑی رقم مختص کی گئی۔

 انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان تو ویمن ان پارلیمنٹ کی بات کرتے تھے اب کیا ہوگیا؟۔ بیگم بیلم حسنین  نے کہا کہ پی ٹی آئی کا دعویٰ ہے کہ ہماری جماعت میں سب سے زیادہ عورتیں ہیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -