یونیورسٹیز ایکٹ میں مجوزہ ترامیم نا منظور! یونیورسٹی ٹیچرز فورم کا اعلان

    یونیورسٹیز ایکٹ میں مجوزہ ترامیم نا منظور! یونیورسٹی ٹیچرز فورم کا اعلان

  

ملتان ( سٹاف رپورٹر)بہاؤالدین زکریا یونیورسٹی میں یونیورسٹی ٹیچرز فورم کا اجلاس منعقد ہوا جس کی صدارت ڈاکٹر سعید اختر شیخ نے کی۔ اجلاس میں پروفیسر ڈاکٹر عبدالقدوس صہیب، ڈاکٹر حسن بچہ، ڈاکٹر محمد ریاض، ڈاکٹر عمر چوہدری، ڈاکٹر محمد زبیر، ڈاکٹر محمد رضوان، ڈاکٹر آصف یاسین، ڈاکٹر مقرب اکبر، ڈاکٹر حماد رسول، ڈاکٹر فرخ ارسلان، ڈاکٹر وحید قمر خان، ڈاکٹر فواد(بقیہ نمبر39صفحہ7پر)

رسول، ڈاکٹر رحما عمران، ڈاکٹر عمران چوھدری، ڈاکٹر عامر اسماعیل، ڈاکٹر انیلا حمید، ڈاکٹر خرم افضل، ڈاکٹر عمران ملک، ڈاکٹر طارق اسماعیل، انجینئر زاہد اقبال، انجینئر یاسر انور چوھدری، انجینئر محسن بھٹی، انجینئر شاہداقبال، نوشین بلوچ اور دیگر اساتذہ نے شرکت کی۔ اجلاس میں پنجاب حکومت کی جانب سے یونیورسٹیز ایکٹ میں مجوزہ ترامیم پر تشویش کا اظہار کیا گیا۔ اجلاس کے شرکاء کا کہنا تھا کہ یونیورسٹیز ایکٹ میں ترامیم کے ذریعے نیا نظام لانے کا مقصد جامعات میں بیوروکریسی کی اجارہ داری قائم کرنا ہے جس کا نتیجہ یہ ہو گا کہ جامعات کا علمی تقدس پامال ہو گا ااور بیوروکریسی کی سیاست اور اجارہ داری پروان چڑھے گی جس سے انتظامی نظام تباہ ہوگا۔ شرکاء کا مزید کہنا تھا کہ جامعات کا سربراہ ماہر تعلیم نہ ہونے کی صورت میں علم اور تحقیق میں یقینی کمی آئے گی۔ اس لیے یہ ضروری ہے کہ حکومت نت نئے تجربات سے گریز کرے اور فوری طور پر یہ فیصلہ واپس لے ورنہ یونیورسٹی اساتذہ ملک گیر احتجاج کریں گے۔ اجلاس کے اختتام پر یونیورسٹیز ایکٹ میں مجوزہ ترامیم کے خلاف قرارداد بھی پیش کی گئی جسے متفقہ طور پر منظور کر لیاگیا۔

اعلان

مزید :

ملتان صفحہ آخر -