کورونا وائرس، سعودی عرب کتنے غیر ملکیوں کو نوکریوں سے فارغ کرنے پر مجبور ہو گیا؟ پریشان کن خبر

کورونا وائرس، سعودی عرب کتنے غیر ملکیوں کو نوکریوں سے فارغ کرنے پر مجبور ہو ...
کورونا وائرس، سعودی عرب کتنے غیر ملکیوں کو نوکریوں سے فارغ کرنے پر مجبور ہو گیا؟ پریشان کن خبر

  

ریاض (ویب ڈیسک)کورونا وائرس کے باعث جہاں بے روزگاری بڑھ رہی ہے وہیں سعودی عرب بھی 12 لاکھ غیر ملکی افراد کو نکالنے پر مجبور ہے، تفصیلات کے مطابق سعودی عرب سے 2020کے دوران تقریباً 12لاکھ تارکین وطن مزدور واپس چلے جائیں گے۔

جدوہ انویسٹمنٹ کمپنی کی ایک رپورٹ کے مطابق میزبانی ، کھانے پینے کی خدمات ، انتظامیہ اور کھیلوں کی سرگرمیوں ، بہ شمول کرایہ اور لیز ، ٹریول ایجنسیوں ، سکیورٹی اور عمارتوں کی خدمات کے شعبے زیادہ متاثر ہوں گے اور ان میں کام کرنے والے تارکینِ وطن مزدور آبائی ممالک کو لوٹ جائیں گے۔

تاہم اس رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ غیرملکیوں کے اتنی زیادہ تعداد میں انخلاءکے باوجود سعودی شہریوں میں بے روزگاری کی شرح میں کوئی کمی واقع نہیں ہوگی اور وہ 12 فی صد پر برقرار رہے گی۔

مزید :

عرب دنیا -