گرمی بڑھتے ہی صحرائے تھر میں سانپوں کے کاٹنے کے واقعات بھی بڑھ گئے

گرمی بڑھتے ہی صحرائے تھر میں سانپوں کے کاٹنے کے واقعات بھی بڑھ گئے
گرمی بڑھتے ہی صحرائے تھر میں سانپوں کے کاٹنے کے واقعات بھی بڑھ گئے

  

عمرکوٹ(سید ریحان شبیر ) موسم گرم ہوتے ہی صحرائے تھر   کی ریتلی زمین سےزہریلے سانپ ، بچھو اور  دیگر  زہریلےحشرات الارض اپنے بلوں سے باہر نکل آئےہیں اور سانپ کے کاٹے جانے کے واقعات میں اضافہ دیکھنے میں آیا، جون کے ابتدائی15  دنوں میں زہریلے سانپوں نے "20"سے زائد افرادکو ڈس لیا۔

محکمہ صحت کے اعداد و شمار میں بھی ان واقعات کی تصدیق ہوئی ہے تاہم   غیرسرکاری اعدادوشمارمطابق گذشتہ25  دنوں میں 70سےزائد سانپ کاٹنے کےواقعات ہوچکےہیں۔ یہ امر قابل ذکرہے کہ تھرمیں ہرسال سانپ ڈسنےسے کافی اموات ہوجاتی ہے، غریب سادہ لوح انسان اپنےطورپر گھریلوں ٹوٹکوں سے حفاظتی تدابیر کرنےپرمجبورہے۔

مزید :

علاقائی -سندھ -عمرکوٹ -