سابق لبنانی وزیر اعظم رفیق حریری کے قتل میں ملوث 2 افراد کو سزا سنادی گئی

سابق لبنانی وزیر اعظم رفیق حریری کے قتل میں ملوث 2 افراد کو سزا سنادی گئی
سابق لبنانی وزیر اعظم رفیق حریری کے قتل میں ملوث 2 افراد کو سزا سنادی گئی

  

بیروت (ویب ڈیسک) اقوام متحدہ کے تحت قائم کئے گئے لبنان ٹریبونل نے سابق لبنانی وزیر اعظم رفیق حریری کے قتل کے الزام میں دو افراد کو عمر قید کی سزا سنادی ہے ۔ یاد رہے کہ رفیق حریری کو 2005میں لبنان کے دارالحکومت بیروت میں ہونے والے بم دھماکے میں قتل کردیا گیاتھا، دھماکے میں سابق وزیر اعظم رفیق حریری سمیت 22افراد مارے گئے تھے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار داد کے نتیجے میں 2007 میں قائم لبنان ٹریبونل نے نیدر لینڈ کے شہر ہیگ میں دونوں ملزمان حسن حبیب مرحی اور حسین حسن اُنیسی کی عدم موجودگی میں انہیں عمر قید کی سزا سنائی ہے، رواں سال مارچ میں عدالت دونوں ملزمان کی بریت کا فیصلہ واپس لیتے ہو ئے انہیں دہشت گردی اور قتل کے الزام میں مجرم قرار دے چکی ہے ۔ ٹریبونل پریذائیڈنگ جج ایفانا ہرڈلیکوفا نے حسن حبیب مرحی اور حسین حسن اُنیسی کو زیادہ سے زیادہ سزا عمرقید سناتے ہوئے کہا کہ ان کے بم حملے سے نہ صرف براہِ راست لوگ متاثر ہوئے بلکہ ان دھماکوں نے لبنانی عوام کو بھی دہشت زدہ کردیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -