لاہور اور گردو نواح میں تیز آندھی، بارش، دیواریں گرنے سے 5افراد جاں بحق

  لاہور اور گردو نواح میں تیز آندھی، بارش، دیواریں گرنے سے 5افراد جاں بحق

  

       لاہور(خبر نگار، کرائم رپورٹر،نیو ز رپورٹر) صوبائی دارالحکومت اور گردو نواح میں تیز آندھی اور بارش سے گرمی کا زور ٹوٹ گیا، لاہور کے مختلف علاقوں میں رات گئے تک وقفے وقفے سے بارش کا سلسلہ جاری رہا محکمہ موسمیات کے مطابق آج بالائی خیبر پختونخواہ، بالائی پنجاب، اسلام آباد اور مختلف علاقوں میں مطلع جزوی ابر آلود رہنے کے علاوہ تیز ہواؤں او ر آندھی اور بعض مقامات پر گرج چمک کے ساتھ بارش کا بھی امکان ہے اس دوران جنوبی پنجاب اور بالائی سندھ میں گرد آلود ہوائیں اور آندھی چلنے کا بھی امکان ظاہر کیا گیا ہے محکمہ موسمیات کے مطابق آج سے خیبر پختونخواہ پنجاب او ر اسلام آباد خطہ پوٹھوہار، گلگت بلتستان اور کشمیر میں مطلع جزوی ابر آلود رہنے کے علاوہ تیز ہواؤں، آندھی اور گرج چمک کے ساتھ بارش کا بھی امکان ہے تاہم ملک دیگر علاقوں میں موسم گرم اور خشک جبکہ بالائی سندھ اور شمال مشرقی بلوچستان میں گرد آلود ہوائیں اور آندھی چلنے کے علاوہ گرج چمک کے ساتھ بارش کی توقع ہے جبکہ گزشتہ روز صوبہ کے بیشتر اضلاع میں موسم شدید گرم اور خشک رہے گا  تاہم شام کے وقت راولپنڈی، مری، گلگت،اٹک، چکوال، جہلم، میانوالی، سرگودھا، خوشاب، حافظ آباد، منڈی بہاؤالدین،  سیالکوٹ، نارروال، لاہور، شیخوپورہ، فیصل آباد، جھنگ، ٹوبہ ٹیک سنگھ میں آندھی اور گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے جبکہ ملتان، ڈیرہ غازی خان، راجن پور، بھکر، لیہ، ساہیوال، خانیوال، بہاولنگر، بہاولپور اور رحیم یار خان میں گرد آلود ہوائیں آندھی کی توقع ہے تاہم آج ہلکی بارش کا بھی کئی مقامات پر امکان ہے۔دوسری طرف صوبائی دارالحکومت میں شدید آندھی اور طوفان سے مختلف علاقوں میں گھر کی دیواریں گرنے سے5 افراد جاں بحق اور 1 زخمی ہو گئے۔تفصیلات کے مطابق بند روڈ اعوان مارکیٹ کے قریب اور ٹھوکر نیاز بیگ کے گوپے شاہ پنڈ میں گھر کی دیوار گرنے سے 6 افراد ملبے تلے دب گئے۔حادثے میں 5 افراد جاں بحق اور 1 زخمی ہو گئے۔ریسکیو نے زخمیوں کو طبی امداد کیلئے ہسپتال منتقل کر دیا دریں اثناشدید آندھی اور تیز بارش کے باعث لیسکو کے لاہور ریجن سمیت دیگر سرکلز میں بجلی کا ترسیلی نظام درہم برہم، 230 فیڈر ٹرپ جبکہ 50 سے زائد ٹرانسفارمرز جواب دے گئے۔تفصیلات کے مطابق رات گیارہ بجے کے بعد شروع ہونے والی شدید آندھی اور اس کے بعد تیز بارش کے باعث صوبائی دارالحکومت سمیت دیگر سرکلز میں بجلی کا ترسیلی نظام ٹھپ ہو کر رہ گیا۔ اور 230 فیڈرز ٹرپ کر گئے۔ جبکہ اس کے علاوہ لاہور ریجن سمیت شیخوپورہ میں 50 سے زائد ٹرانسفارمر بھی جل کر تباہ ہوگئے. فیڈرز کے ٹرپ کرنے اور ٹرانسفارمرز کے جواب دینے پر لاہور سمیت  متعدد علاقے مکمل طور پر اندھیرے میں ڈوب گئے جس کے باعث لوگوں کو شدید پریشانی کا سامنا کرنا پڑا۔دوسری جانب لیسکو کی فیلڈ ٹیموں نے بھی ہاتھ کھڑے کر دیئے اور آندھی اور بارش بارش کا بہانہ بنا کر شہریوں کو نہ آنے کا جواب دیتے رہے۔ اس حوالے سے ترجمان لیسکو کا کہنا ہے کہ شدید بارش اور آندھی کے دوران پولز اور تاروں کے قریب جانا خطرے سے خالی نہیں ہوتا اس لیے صارفین بارش کے رکنے کا انتظار کریں، جیسے ہی موسم بہتر ہوگا فیلڈ ٹیمیں اپنا کام شروع کر دیں گی۔

بارش

مزید :

صفحہ اول -