بلوچستان کبھی تسلیم ہی نہیں ہوا، بیرونی ممالک میں عدم مداخلت اور انصاف کے نظام پر مبنی پاکستان ہمیشہ قائم رہے گا: محمو د خان اچکزئی

بلوچستان کبھی تسلیم ہی نہیں ہوا، بیرونی ممالک میں عدم مداخلت اور انصاف کے ...
بلوچستان کبھی تسلیم ہی نہیں ہوا، بیرونی ممالک میں عدم مداخلت اور انصاف کے نظام پر مبنی پاکستان ہمیشہ قائم رہے گا: محمو د خان اچکزئی

  


کوئٹہ(مانیٹرنگ ڈیسک) پختونخواہ ملی عوامی پارٹی کے سربراہ محمود خان اچکزئی نے کہا ہے کہ بلوچستان میں بلوچ اور پشتونوں کی غیر فطر ی شمولیت کو کبھی دل سے تسلیم ہی نہیں کیاگیا، اگر پاکستان میں بلوچ، پشتون ، پنجابی، سرائیکی اور سندھی اقوام کو ان کی سرزمین اور وسائل پر اختیار دیا جاتا ہے اور افغانستان میں کسی قسم کی مداخلت نہیں کی جاتی تو ایسا پاکستان قیامت تک رہے گا اور ہم اُنہیں زندہ آباد کہیں گے۔ایک انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ ایوب خان کے خلاف بننے والی تحریک میں شامل بلوچ ، پنجابی ، بنگالی ، سندھی اکابرین کا یہ تحریری معاہدہ تھا کہ ون یونٹ کی بحالی کے بعد زبان، ثقافت کی بنیاد پر صوبے تشکیل دیے جائیں گے لیکن ایسا نہ ہوا۔محمود خان اچکزئی کاکہناتھاکہ افسوسناک بات ہے کہ بلوچستان کے پشتونوں کے ساتھ ظلم یہ ہوا کہ انہیں بلوچ بھائیوں کے ساتھ ایک صوبے میں شامل کیا گیا، اس غیر سیاسی اور غیر فطری شمولیت کو کبھی تسلیم ہی نہیں کیا۔اُن کاکہناتھاکہ امن اگرچہ ایک خوبصورت لفظ ہے مگر اس کے لیے بنیادی شرط انصاف ہے، اگر انصاف نہ ہو تو دنیا کا کوئی بھی نظام نہیں چل سکتا۔

مزید : کوئٹہ /اہم خبریں