آئی ایم ایف سے معاہدہ جلد متوقع،مشکل وقت ضرور ،عوام کی چیخیں بالکل نہیں نکلیں گی ،اسد عمر

آئی ایم ایف سے معاہدہ جلد متوقع،مشکل وقت ضرور ،عوام کی چیخیں بالکل نہیں ...

  

اسلام آباد،ٹیکسلا(سٹاف رپورٹر، نیوز ایجنسیاں) وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر نے کہا ہے مشکل وقت ضرور لیکن عوام کی چیخیں بالکل نہیں نکلیں گی، عوام کی چیخوں والے الفاظ میں نے نہیں کہے،سی پیک پروجیکٹس میں سے ایک روپیہ بھی کم نہیں کیا جارہا ہے،ہم آئی ایم ایف سے معاہد ے کے قریب پہنچ چکے ہیں، آئی ایم ایف کا وفداسی ماہ پاکستان آئیگا۔اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو،اپنے انتخابی حلقے ا ین اے 54 اسلام آباد میں کھلی کچہری اور ترنول پریس کلب کی تقریب حلف برداری سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خزانہ نے کہا انسان غلطی کرتا ہے اور میں بھی غلطی کرتا ہوں، ایک بڑے اخبار کا مہنگائی بڑھنے سے عوام کی چیخیں نکلنے کابیان مجھ سے منسوب کرنا سراسر غلط ہے کیونکہ میں نے یہ الفاظ کہے ہی نہیں، غلط خبر چلانے پر متعلقہ ادارے کو قانونی نوٹس بھجوا سکتا ہوں، قومی اسمبلی قائمہ کمیٹی کی ہر بات ریکارڈ پر ہے ،لیکن یہاں کوئی سچ لکھنے اور ماننے کو تیار نہیں ہم نے ڈاکو منٹری ثبوت بھی دیئے لیکن یہاں تو مین نہ مانوں والی بات ہے،اگر ایک سال میں بجلی و گیس میں چھ سوارب روپے کا خسارہ کریں تو خسارے کی رقم زرداری یا نواز شریف کے اکاؤ نٹس سے آئیگی،یہ حقیقت ہے کہ مہنگائی ہے اور لوگ مشکل میں بھی ہیں، آئی ایم ایف نے ہم سے کہا مشکل اقدامات اٹھائیں جو ہم اٹھا ئے اب ہم آئی ایم ایف سے معاہدہ کے قریب پہنچ چکے ہیں، میں بھی آئندہ ماہ آئی ایم ایف سے مذاکرات کرنے جارہا ہوں۔ بھارت نے بہت کوشش کی پاکستان کو بلیک لسٹ میں شامل جائے لیکن ایسا نہیں ہوسکا، بھارتی جارحیت سے پاکستان کی کرنسی مارکیٹ کسی بھی دباو کا شکار نظر نہیںآئی بلکہ ان ایام میں ذخائر میں 80 ملین ڈالرز کا اضافہ ہوا ، بھارت اگر یہ سمجھتا ہے کہ دباو ڈال کر پاکستان سے کوئی کام کروا سکے گا تو یہ اس خام خیالی ہے اور رہے گی جو امید ہے دور ہوگئی ہوگی، اسلام آباد کے قانونی و غیر قانونی علاقوں کی نشاندہی کا مسئلہ جڑ سے حل کریں گے،متحدہ عرب امارات کسی ملک کو ادھا ر تیل نہیں دیتا پاکستان کو بھی متحدہ عرب امارات سے ادھار تیل نہیں ملے گا،چائنہ کیسا تھ ادھار پر تیل کا معاملہ زیر غور نہیں، بلاول زرداری مجھے جو کچھ کہیں کوئی اثر نہیں پڑتا لیکن پاکستان کیخلاف بات نہ کریں ۔ چائنہ سے زر مبا د لہ کے ذخائر کیلئے دو ارب ڈالر ملنے کی بات چیت جا ر ی ہے اور آئی ایم ایف کے پاکستان میں نئے مشن چیف تعینات کر دیئے گئے ہیں ، تیل کی قیمتوں اور موبائل پر ٹیکسوں کی وجہ سے ٹیکس کم اکھٹا ہوا، بلاول زرداری نے مجھے پڑھا لکھا جاہل کہا ،میں نے اس پر اعتراض اٹھایا تھا کہ بلاول کے بیانیہ کو بھارت ہمارے خلاف ہی استعمال کرے گا ۔میری بات سچ ہوئی اگلے روز بھارتی اخبارات کی یہی شہ سرخیاں تھیں، اسلام آباد کے سیکٹرز ای گیارہ اور ای بارہ نے اپنے مسائل کے انبار لگا دئیے ہیں اسلام آباد کے تاجروں کیلئے پائلٹ پراجیکٹ مارچ میں شرو ع کر دیں گے،جس کے تحت تاجروں کو فکس ٹیکس جمع کرانے کی سہولت دی جائے گی اس کے علاوہ لوگوں کے بجلی و گیس کے کنکشنز کے مسائل بھی حل کریں گے ،موجودہ حکومت کو تاریخ کے بد ترین معاشی حالات کا سامنا ہے جو آج سے پہلے کبھی نہ تھا، پاکستان کومعاشی بحران سے نکالنے کیلئے مزید مشکل اقدامات کی ضرورت ہے،تاہم معاشی اصلاحات کی بنا پر کچھ بہتری آرہی ہے، گیس کے نظام میں چھ سو ارب روپے کا خسارہ زرداری کے سوئیزر لینڈ اکاونٹ یا نواز شریف کی لند ن کی جائیداوں سے نہیں پورا ہونا ، یہ خسارہ بھی پاکستانی عوام نے ہی بھرنا ہے،منی لانڈرنگ کے حوالے سے سخت ترین قوانین وضع کئے جارہے ہیں،معاشی بحران کے ذمہ دار سابقہ دور میں اقتدار پر قابض لوگ تھے،جنہوں نے صرف الیکشن جیتنے کیلئے ایک سال کے اندر ساڑھے چار ارب روپے بجلی کے نظام میں خسارہ کیا جبکہ ڈیڑھ سو ارب روپے گیس کے نظام میں خسارہ کیا ،اب چھ سو ارب روپے خسارہ موجودہ حکومت کہاں سے پورا کرے ،این اے 54 میں بالخصوص دیہی علاقوں میں ریکارڈ ترقیاتی کام ہونگے جس کی مثال پاکستان ن کی تاریخ میں نہیں ملے گی، وزیر اعظم کی ذاتی کاوشوں سے دوست ممالک نے بھرپور امداد دی، ایشن ڈویلپمنٹ بینک اور ورلڈبینک سے تو پاکستان ہر سال قرض لیاتا ہے ۔

مزید :

صفحہ اول -