آؤملکر احتجاج کریں،پی پی ،(ن) لیگ کا فضل الرحمن سے رابطہ

آؤملکر احتجاج کریں،پی پی ،(ن) لیگ کا فضل الرحمن سے رابطہ

لاہور( شہزاد ملک سے ) اپوزیشن رہنماؤں کے خلاف نیب کی کاروائیوں پرپاکستان پیپلز پارٹی اور پاکستان مسلم لیگ (ن) نے جے یو آئی کے سر براہ مولانا فضل الرحمن سے رابطہ کیا ہے اور انہیں اس بات پر قائل کیا جارہا ہے کہ تحریک کے اوائل میں ڈی چوک اسلام آباد میں دھرنا دیا جائے ‘ البتہ اس دھرنے کی بنیاد ختم نبوت پر حکومتی موقف کو بنایا جائے گا ۔ذرائع نے ’’پاکستان‘‘ کو بتایا ہے کہ پاکستان پیپلز پارٹی نے پارٹی کے بعض سنیئر رہنماؤں کے نیب کیسز کو اسلام آباد منتقل کرنے کے اقدام پر اپنی جوابی حکمت عملی کے تحت پلان بنایا ہے جس کے مطابق جے یو آئی (ف) کے سر براہ مولانا فضل الرحمن سے رابطہ کیا گیاہے اور ان سے کہا گیا ہے کہ وہ اس ضمن میں اسلام آباد کے ڈی چوک میں ایک احتجاجی دھرنا پلان دیں پیپلز پارٹی اس دھرنے میں ان کی مکمل سپورٹ کرے گی ۔دوسری طرف جے یو آئی (ف) کے ذرائع کا کہنا ہے کہ مولانا فضل الرحمن نے پیپلز پارٹی کی اس تجویز پر کہا ہے کہ وہ ختم نبوت کی تحریک پہلے ہی پورے ملک میں چلا رہے ہیں لیکن وہ ایک غیر سیاسی تحریک ہے اور وہ اب بھی اپنی پارٹی سے مشاورت کررہے ہیں کہ ختم نبوت کے ایشو کو ہی بنیاد بنا کر اسلام آباد کے ڈی چوک میں بھی دھرنا دیا جائے ۔ادھر پیپلز پارٹی کے ذرائع کا کہنا ہے کہ مولانا فضل الرحمن کے اس جواب کے بعد پیپلز پارٹی نے ان سے کہا کہ ٹھیک ہے وہ اس ایشو پر ہی دھرنا دیدیں ہم ان کے ساتھ اسی دھرنے میں شریک ہو کر اپنا موقف بھی پیش کر لیا کریں گے ۔

ختم نبوت

مزید : صفحہ اول