منظم سازش کے تحت واقعہ کی ویڈیو بنائی گئی ،مشتاق احمد خان

منظم سازش کے تحت واقعہ کی ویڈیو بنائی گئی ،مشتاق احمد خان

بٹ خیلہ(بیورورپورٹ) جماعت اسلامی کے سینیٹر مشتاق احمد خان نے جامعہ رحمانیہ درگئی میں 53ویں ختم بخاری شریف کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاہے کہ نیوزی لینڈ میں منظم سوچ کے دہشت گرد نے منظم انداز میں اپنے نٹ ورک کے ہمراہ واقعہ کی ویڈیو بناتے ہوئے ایک دن پہلے کھلم کھلا اعلان کرنے کے بعد بے گناہ مظلوم نمازیوں پر وحشانہ، اندھادھند اور بے رحمانہ فائرنگ کرتے ہوئے 50افراد کو قتل جبکہ 50سے زائد کو زخمی کیا،مٹھی بھر طالبان نے ایمانی طاقت سے آمریکہ کو شکست سے دوچار کیااور اپنے مطالبات میں عافیہ صدیقی کو رہاکرانے کا مطالبہ بھی کیاجس کی کریڈٹ کسی اور کولینے کی ضرورت نہیں، گذشتہ روز عافیہ صدقیی کی 80سالہ ماں سے ملاقات میں انہوں نے عافیہ اک ذکر کرتے ہوئے بتایا کہ اس نے دنیاوی علم کے ساتھ گھر ہی پر قرآن کو حفظ کیاجب قرآت کرتے تھے تو ہم روپڑتے،ہم نیشنل ایکشن پلان کے نام پر مساجد اور مدارس کی تالہ بندی اور علماء کے خلاف ایکشن کو نہیں مانتے ۔ہم جغرافیائی اور نظریاتی سرحدوں کے نگہبان، پشتبان اور پاسبان ہیں اس کیلئے ہرقسم قربانی کو تیار ہیں۔ اس تقریب کی صدارت رابطہ المدارس پاکستان کے صدر مولنا عبدالمالک نے کی جبکہ مولانامحمد اسماعیل، ڈاکٹر مولاناعطاء الرحمان، شیخ القرآن والحدیث مولانا نصیر احمد ،انقلابی شاعر حسین احمد صادق،مہتمم جامعہ ہٰذا عطاء الرحمان نے خطاب کیا ، اس موقع پر جید علماء کرام و شیوخ کے ساتھ مدارس کے طلباء سمیت علاقے کے عوام نے کثیرتعداد میں شرکت کی۔تقریب میں 52فارغ تحصیل طلباء کو اسناد اور بانی جامعہ ہٰذا مولانا عنایت الرحمان مرحوم کی سیرت کی کتاب دیا گیا۔کمپیوٹر میں 7افراد کو اسناد دئیے گئے۔ اس موقع پر کہاگیا کہ ہم ایسے کتب تیار کررہے ہیں جو تمام سکولوں کے بچوں کو اردو، قرآت ، تجوید میں آسانی فراہم کرسکے۔ ساتھ ہی ایک کمپلیکس کی تعمیر کا بھی اعلان کیا گیا جس پر تقریباً سات کروڑ روپے خرچ آئے گا کے بارے میں مخیر حضرات سے امداد کی اپیل بھی کی گئی۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر عطاء الرحمان اور سینیٹر مشتاق احمد خان نے کہاکہ اسلامی مراکز مساجد ومدارس ہی قیادت و امامت کے اہل ہیں اور یہی لوگ ہمارے بحرانوں اور مسائل کو حل کرسکتے ہیں۔جماعت اسلامی کا ایک بہت بڑا نٹ ورک جو کہ مساجد و مدارس ، عوامی خدمت کے اداروں کی شکل میں امت مسلمہ کی بھلائی اور ان کی خیر خواہی کیلئے کام کررہے ہیں۔ چونکہ ہم اللہ کی زمین پر اللہ کا نظام چاہتے ہیں اس لئے جماعت اسلامی پر پابندی لگتی ہیں جیل کی سلاخیں ، پھانسیاں او ر ہماری راہ کی بندشیں قدم قدم پر ہماری راہ تکتی ہے۔نیوزی لینڈ میں ایک فی صد مسلمان ہیں ان کو بھی نہیں بخشاگیا اور صلیبی جنگوں کے جرنیلوں اور ان ہی تاریخ پر فخر کرنے والے دہشت گرد نے ایک دن پہلے آزادانہ اعلان کرتے ہوئے جمعہ کے دن ویڈیوبناتے ہوئے بغیر کسی خوف کے اندھا دھند نمازیوں پر فائر کیا جس میں کسی کو بھی خواہ وہ خاتون ہو یا بچہ معاف نہیں کیا ۔چونکہ ہم ایک اندازے کے مطابق 80فی صد پاکستانی دین کو سیکھنے پر ایک روپیہ خرچ کئے بغیر اسے سیکھنا چاہتے ہیں وہ کس طرح اپنے اسلاف سے باخبر ہوسکتے ہیں اس میں دینی جذبہ کہاں سے ہوگا۔ ہم نے دیکھا کہ افغانستان میں مٹھی بھر طالبان بے یار و مددگار کے خلاف ہر قسم کی آگ و بارود کااستعمال کیاگیا لیکن سپر پاور آج ان کے قدموں میں شکست فاش ہوکر مذاکرات کرنا چاہتے ہیں۔ یہی ایمان کی طاقت ہے اور یہی اللہ کی مدد و نصرت ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر