نیوزی لینڈ حملہ ، دہشتگرد کو پکڑنے کی کوشش کے دوران شہید ہونے والے نعیم رشید کیلئے وزیراعظم عمران خان نے بڑا اعلان کر دیا

نیوزی لینڈ حملہ ، دہشتگرد کو پکڑنے کی کوشش کے دوران شہید ہونے والے نعیم رشید ...
نیوزی لینڈ حملہ ، دہشتگرد کو پکڑنے کی کوشش کے دوران شہید ہونے والے نعیم رشید کیلئے وزیراعظم عمران خان نے بڑا اعلان کر دیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )نیوزی لینڈ کے شہر کرائسٹ چرچ میں دہشتگرد نے جمعہ کے روز اندھا دھند فائرنگ کرتے ہوئے 50 نمازیوں کو شہید کر دیا جس پر پوری مسلم امہ غمزدہ ہے تاہم اس دوران ایک پاکستانی نعیم رشید اس سفید فام دہشتگرد کو پکڑنے کی کوشش کرتے ہوئے شہید ہو گئے جسے وزیراعظم عمران خان نے قومی ایوارڈ سے نوازنے کا اعلان کر دیا ۔

تفصیلات کے مطابق نیوزی لینڈ کے حملے میں شہید ہونے والے پاکستانیوں کی تعداد 6 سےبڑھ کر  9 ہو گئی ہے جبکہ ایک اور پاکستانی کی حالت تشویشناک ہے ۔ وزیراعظم عمران خان نے پیغام جاری کرتے ہوئے کہاہے کہ ”کرائسٹ چرچ حملے میں شہید ہونے والے پاکستانیوں کے اہل خانہ کے ساتھ کھڑے ہیں اور ہمارا مکمل تعاون ان کے ساتھ ہے ، پاکستان کو میاں نعیم رشید پر فخر ہے جو کہ سفید فام دہشتگرد کو پکڑنے کی کوشش کرتے ہوئے شہید ہو گئے ، بہادری کی ایسی مثال قائم کرنے پر انہیں نیشنل ایوارڈ کے سے نوازا جائے گا ۔

واضح رہے کہ ڈاکٹر نعیم رشید نے کرائسٹ چرچ کی النور مسجد میں دہشت گرد حملہ آور کو روکنے کی کوشش میں جان دی تھی،دہشت گردی کی اس ہولناک واردات میں ڈاکٹر نعیم رشید کا 21 سالہ بیٹا طلحہ نعیم بھی شہادت کے عظیم رتبے پر فائز ہوا تھا ۔ سوشل میڈیا پر ڈاکٹر نعیم رشید  کی بہادری اور حوصلے کی ستائش جاری ہے۔دوسری طرفشہید ڈاکٹر  نعیم رشید کے بھائی خورشید عالم نے کہا ہے کہ حکومت کی طرف سے ان کے بھائی کے لیے اس انعام کا اعلان اُن کی فیملی کے لیے بہت زیادہ معنی رکھتا ہے، مجھے فخر محسوس ہو رہا ہے۔انہوں نے اپنے بھائی اور بھتیجے کی موت کو ایک بڑا صدمہ قراردیتے ہوئے  کہا کہ نعیم گزشتہ برس ہی پاکستان آئے تھے اور دو ماہ کے لیے ان کے ساتھ رہے تھے۔

مزید : قومی