وزیر مملکت علی محمد خان نے الیکشن 2018کی شفافیت سے متعلق حیران کن دعویٰ کردیا

وزیر مملکت علی محمد خان نے الیکشن 2018کی شفافیت سے متعلق حیران کن دعویٰ کردیا
وزیر مملکت علی محمد خان نے الیکشن 2018کی شفافیت سے متعلق حیران کن دعویٰ کردیا

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر مملکت علی محمد خان نے کہاہے کہ مجھے الیکشن 2018 الیکشن 2013سے شفاف اس لئے لگا کہ اس الیکشن میں کسی کو بدمعاشی نہیں کرنے دی گئی اور لوگوں کو موقع دیا گیا کہ جس کوووٹ دیناہے ، اس کو ووٹ دیں۔

جیونیوز کے پروگرام ”نیا پاکستان “ میں گفتگو کرتے ہوئے علی محمد خان نے کہا کہ قوم اب دوبارہ مایوسیوں اور اندھیروں کے سوداگروں کے پیچھے نہیں لگے گی،ہم یہاں سچ اس لئے نہیں بولیں گے کہ لوگ واہ واہ کریں بلکہ سچ اس لئے بولیں گے کہ یہ ہمارا ملک ہے ، ہم پر 22کروڑ عوام کا قرض ہے اور ہم کو یہ قرض اتارنا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ مجھے الیکشن 2018الیکشن 2013سے شفاف اس لئے لگا کہ اس الیکشن میں کسی کو بدمعاشی نہیں کرنے دی گئی اور لوگوں کو موقع دیا گیا کہ جس کوووٹ دیناہے ، اس کو ووٹ دیں۔

ان کا کہنا تھا کہ ابھی تک ہم آئی ایم ایف کے پاس نہیں گئے اور ملک کو معاشی بحران سے نکالا، اس وقت بیروز گاری اور خسارے کا مسئلہ ہے لیکن یہ مسئلہ موجودہ حکومت کا پیدا کردہ نہیں ہے ۔

مزید :

قومی -