موجودہ حکومت کے مثبت اقدامات فلم سازی کے رحجان میں اضافہ

موجودہ حکومت کے مثبت اقدامات فلم سازی کے رحجان میں اضافہ

لاہور (فلم رپورٹر) فلم انڈسٹری کی بحالی کے لئے موجودہ حکومت ترجیح بنیادوں پر اقدامات کررہی ہے یہی وجہ ہے کہ فلم سازی کے رحجان میں اضافہ ہوا ہے اور نئی فلمیں اچھا بزنس کررہی ہیں ۔رپورٹ کے مطابق حکومت نے فلم انڈسٹری کی بحالی کے لئے ترجیحی بنیادوں پر کئے جانے والے حکومتی اقدامات کی بدولت ملک میں دوبارہ اچھی اور معیاری فلمیں بننا شروع ہوگئی ہیں ۔ پرانے اور تجربہ کار فلمسازوں کے علاوہ نوجوان بھی اس شعبہ سے وابستہ ہوئے ہیں اور ٹیلی وژن سکرین پر اپنی صلاحیتوں کو لوہا منوانے والے بہت سے ہدایتکار اور اداکار بھی اس میدان میں اترے ہیں جن کی کاوشوں سے فلم انڈسٹری ایک مرتبہ پھر فعال ہوئی ہے۔

اب پاکستان میں بھی عالمی معیار کی فلمیں بن رہی ہیں جنہوں نے فیملیز کو دوبارہ سینما گھروں میں جانے پر مجبور کردیا ہے۔ لاہور اور کراچی کے بعد اسلام آباد میں بھی فلم پرودڈکشن شروع ہوگئی ہے اور حرکت پکچرز کے زیر اہتمام یہاں سے فلم ’’سینٹی اور مینٹل‘‘ تیار کی جارہی ہے جس کی ٹیم نوجوان ہدایتکار ‘ مصنف اور اداکاروں پر مشتمل ہے۔ اسلام آباد سے تعلق رکھنے والی یاسرہ رضوی کی اس فلم کی جلد ہی اسلام آباد میں شوٹنگ شروع ہوگی۔ لاہور اور کراچی میں بھی عالمی معیار کی اردو فلمیں بن رہی ہیں ۔پنجابی کے علاوہ علاقائی زبانوں پشتو ‘ سندھی اور سرائیکی میں بھی فلمیں بن رہی ہیں ۔فلم انڈسٹری کے فعال ہوتے ہی فلم سے وابستہ تمام شراکت دار بھی مزید متحرک ہوگئے اور ملک بھر میں نئے اور جدید سینما گھر بھی تعمیر ہو رہے ہیں۔

مزید : کلچر