پشاور میں 14 سالہ لڑکا جنسی تشدد کا نشانہ بن گیا

پشاور میں 14 سالہ لڑکا جنسی تشدد کا نشانہ بن گیا

  

پشاور(کرائمز رپورٹر)پشاور میں ایک اور بچہ جنسی تشدد کا نشانہ بن گیا پولیس نے ملزم کو گرفتار کرلیا تفصیلات کے مطابق پشاور کے مضافاتی علاقے ریگی للمہ کا رہائشی 14سالہ شہزاد ولد نیاز محمدہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب گھر سے نکل کر لاپتہ ہوا جس کے والد نے اسکی تلاش بسار کے بعد اسکی گمشدگی کی رپورٹ درج کرائی تاہم دوسرے روز اچانک بچہ خود واپس گھر لوٹ آیا ،اور اپنے والد تشدد کے متعلق بتایا جس پر نیاز محمد نے حیات آباد پولیس اسٹیشن میں رپورٹ درج کرائی کہ اسے کارخانوں میں واقع ایک مارکیٹ کے چوکیدار نے گھنٹوں تک کمرے میں محبوس رکھنے کے بعد رات گئے متعدد مرتبہ جنسی تشدد کا نشانہ بنایا اور صبح اس شرط پر رہائی ملی کہ واقعہ کا کسی سے ذکر نہیں کرنا اس سلسلے میں پولیس نے رپورٹ درج کرکے مارکٹ چوکیدار ملزم وکیل خان ولد قدرت شاہ سکنہ جمرود کو گرفتار کرکے متاثرہ شہزاد کو میڈیکل ٹیسٹ کے لئے ہسپتال منتقل کردیا واضح رہے کہ پشاورمیں بچوں سے جنسی ذیادتی کے واقعات میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے جبکہ اس کے تدارک کے لئے کوئی خاص اقدامات نظر نہیں آرہے ہیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -